وسیم خان کا استعفیٰ منظور

چیئرمین پی سی بی کاخراج تحسین
Sep 29, 2021

بورڈ آف گورنرز کے اجلاس میں چیف ایگزیکٹو وسیم خان کےاستعفیٰ کو متفقہ طورپر منظور کرلیا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے بورڈ آف گورنرز کا اجلاس آج بروز بدھ بذریعہ ویڈیو کانفرنس منعقد ہوا، جس میں چیئرمین پی سی بی سمیت بی او جی اراکین نے وسیم خان کےاستعفیٰ کو متفقہ طور پر منظور کرلیا۔

اس موقع چئیرمین پی سی بی رمیز راجہ نے کہا کہ وسیم خان نے اپنے دور میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا، خصوصاَ کوویڈ-19 کی عالمی وباء کے دوران انہوں نے عہدے پر رہتے ہوئےایسےفیصلے کیے جس سے بین الاقوامی اور قومی دونوں سطح پر کرکٹ کی سرگرمیاں متاثر نہیں ہوئیں۔

چیئرمین پی سی بی نے کہا کہ کرکٹ بورڈ وسیم کا مشکور ہےاور اور ہم انکے کیرئیر اور مستقبل کےلیے نیک خواہشات کا اظہار کرتےہیں۔

وسیم خان کا تھا کہ بورڈ سے وابستگی پر انہیں فخر ہے، خصوصاَ سری لنکا کرکٹ ٹیم کی پاکستان آمد سے ملک میں ٹیسٹ کرکٹ کی بحالی اور گزشتہ 2 سالوں سے پاکستان سپر لیگ کے پاکستان میں انعقاد پر وہ بہت مطمئن ہیں۔

انہوں نے کہا کہ 2019 میں جب انہوں نے اس عہدے کا چارج سنبھالا تو اولین ذمہ داری دنیا بھر میں پاکستان کرکٹ اور بورڈ کا مثبت تشخض اجاگر کرنا تھا۔ ایسے میں ہم نے ایک جامع اور منظم حکمت عملی کے تحت فیصلے کیے جس سے بین الاقوامی سطح پر ہمارا امیج بہترا ہوا۔

پی سی بی کی وسیم خان کے استعفے کی تصدیق

وسیم خان نے کہا کہ ان کا 5سالہ حکمت عملی پیش کرنا، نئے ڈومیسٹک نظام کو کامیابی سے 3 سال بھی منعقد کروانا اور خواتین کرکٹ میں سرمایہ کاری کرنے کے مثبت اثرات جلد سامنے آئیں گے۔ میرے لیے آگے بڑھنےاور اپنی فیملی سے دوبارہ ملنے کا یہی بہترین وقت ہے۔ انہوں نے پاکستان کرکٹ کی ترقی کے لیے میرے خوابوں کی تکمیل میں بہت قربانیاں دی ہیں اور یہ قربانیوں ہمیشہ میرے دل کے قریب رہیں گی۔

واضح رہے کہ راجہ کے چیئرمین پی سی بی منتخب ہونے سے قبل ہیڈ کوچ مصباح الحق اور بولنگ کوچ وقار یونس بھی اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے تھے۔

مصباح الحق اور وقار یونس کی جگہ عبدالرزاق اور ثقلین مشتاق کو پی سی بی نے عبوری کوچ بنایا تھا۔

یاد رہے کہ وسیم خان نے 2019 میں پاکستان کرکٹ بورڈ میں چیف ایگزیکٹو کےطور پر عہدہ سنبھالا تھا۔

WASIM KHAN

CEO Pakistan Cricket Board

Tabool ads will show in this div