ایف آئی اے نے شہباز شریف کو سوالنامہ بھیج دیا

فیملی کیخلاف منی لانڈرنگ، جعلی اکاؤنٹس سے متعلق سوالات

FIA Q Paper For SS Lhr Pkg 29-09

وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) نے سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کی فیملی کے خلاف منی لانڈرنگ اور جعلی اکاونٹس سے متعلق ایک سوالنامہ بھیج دیا ہے۔

سوالنامے میں پوچھا گیا ہے کہ رمضان شوگر مل میں 2008 سے 2018 تک 25ارب روپے کا لین دین ہوا، کیا یہ کاروباری لین دین تھا یا مالیاتی جرم؟

اسکے علاوہ فیٹف کے منی لانڈرنگ کے فریم ورک کے بارے میں کیا جانکاری ہے؟ چیئرمین بیوٹیفکیشن کمیٹی گجرات نے ایک کروڑ روپے دیا مگر چیک رمضان شوگر مل کے ملازم کے اکاؤنٹ میں جمع ہوا۔ رمضان شوگر مل کے نائب قاصد ملک مقصود کے اکاؤنٹ میں کروڑوں کی ترسیلات کیسے آئیں؟

سلمان شہباز نے انگلینڈ کی کمپنیوں میں سرمایہ کاری کی ہوئی ہے، اسکا آپ کو کتنا علم ہے؟ آپ نے اپنے وکلاء کو بینکوں کے ذریعے پیسے بھیجے اور خاندان کے اخراجات کے لیے غیر معروف افراد کے ذریعے رقم بھیجی؟

ایف آئی اے نے شہباز شریف کو ہدایت کی ہے کہ وہ آٹھ اکتوبر تک 20سوالوں کے جواب فیکس یا ای میل کے ذریعے ہر حال میں جمع کروائیں۔

Tabool ads will show in this div