عمرشریف کی امریکاروانگی کیلئے ایئر ایمبولینس کوپاکستان آنےکی اجازت

ایئر ایمبولینس 26 ستمبر کی رات 11 بجے کراچی ایرپورٹ لینڈ کرے گی
Sep 24, 2021

Umer sharif

سول ایوی ایشن اتھارٹی نےعمر شریف کے لیے امریکا سے آنے والی ایئر ایمبولینس کو پاکستان آنے کی اجازت دے دی ہے۔

سی اے اے کے شعبہ ایرٹرانسپورٹ نے نوٹیفکیشن جاری کردیا ہے۔ عمر شریف کو لینے کے لیے ایئر ایمبولینس 26 ستمبر کی رات 11 بجے کراچی ایرپورٹ لینڈ کرے گی۔ایئر ایمبولینس کا کال سائن آئی ایف اے 1264 سی اے اے ہے۔ ایئرایمبولینس میں کپتان کے ہمراہ 5 کریو کا عملہ بھی پاکستان آئے گا۔کمپنی کا نام ایف اے آئی رینٹ اے جیٹ ہے۔ ایئر ایمبولینس جرمنی سے کراچی پہنچے گی۔

سول ایوی ایشن نے بتایا ہے کہ ایئر ایمبولینس کی امریکا کے لیے سفر سے قبل کراچی ایرپورٹ پر ری فیولنگ ہوگی۔ سی اے اے نے عمر شریف کو امریکا لے جانے والی ایئر ایمبولینس کے لیے تمام انتظامات مکمل کرلئے ہیں۔

پیر کو سماء کے مارننگ شو میں بات کرتےہوئے اداکار عمر شریف کے بیٹے جواد عمر نے بتایا تھا کہ ان کے والد کی طبعیت بہتر ہے۔ائیرایمبولنس کا ایک طے شدہ ضابطہ ہوتا ہے جس میں یہ شامل ہوتا ہے کہ جن ہوائی اڈوں پر ایندھن بھرنے کے لیے ہیلے کاپٹر اترےگا، وہاں سے اجازت نامہ حاصل کیا جاتا ہے۔

جواد عمر نے بتایا تھا کہ کراچی سے براہ راست عمر شریف کو واشنگٹن اسپتال لے جایا جائے گا۔ قوم کی دعائیں ان کے ساتھ ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ جو لوگ بھی عمر شریف سے پیار کرتے ہیں ان سے درخواست ہے کہ وہ عمر شریف کی اسپتال کے اندر لی گئی تصاویر نہ لیں اور نہ ہی ان کو وائرل کریں۔ یہ تصاویر بہت ذاتی نوعیت کی ہوتی ہیں۔

عمر شریف کے بیٹے نے مزید کہا کہ ان کے والد نے پاکستان سے پیار کیا اور ملک کا نام ہمیشہ بلند کیا۔ جن لوگوں نے عمر شریف کی تصاویر وائرل کیں، اللہ ان کو ہدایت دے۔

انھوں نے یہ بھی کہا کہ حکومت کا شکرگزار ہیں جنھوں نے عمر شریف کو بیرون ملک بھجوانے کےلیے ہرممکن اقدامات کئے۔امریکا میں ڈاکٹرز مکمل تیار ہیں اور وہ صرف عمر شریف کی موجودگی کا انتظار کررہے ہیں۔سندھ حکومت نے ايئرايمبولينس سروس فراہم کرنے والی کمپنی کو تقريباً 4 کروڑ روپے کی ادائيگی کی ہے۔

ايئرايمبولينس ميں عمر شريف کے ساتھ ان کی پہلی اور تیسری اہلیہ، دونوں بیٹے اور طبی عملے کے 2 افراد بھی ساتھ جائيں گے۔عمرشريف امريکا ميں 1 ماہ قيام کريں گے اور ان کا علاج واشنگٹن اسپتال ميں ہوگا۔

پچھلے ہفتے سماء سے بات کرتے ہوئے زرین غزل نے بتایا تھا کہ حکومت پاکستان اورامریکی سفارت خانے کی شکرگزار ہیں جنھوں نے صرف 1 گھنٹے میں ویزہ جاری کیا گیا۔

اس سے قبل امریکہ میں مقیم ریما خان کے خاوند اور معروف ماہر امراض قلب ڈاکٹر سید طارق شہاب نے تصدیق کی تھی کہ عُمرشریف کا علاج جارج واشنگٹن یونیورسٹی اسپتال میں علاج کیا جائے گا اور وہ خود بھی طبی ٹیم کا حصہ ہوں گے۔

Umer sharif

Tabool ads will show in this div