دنيا طالبان سے بات کرے، سربراہ اقوام متحدہ انتونيو گوئتريس

افغانستان ميں انسانی بحران ہولناک ہوسکتا ہے،اقوام متحدہ
Sep 10, 2021

سربراہ اقوام متحدہ انتونيو گوئتريس کا کہنا ہے کہ دنيا طالبان سے بات کرے ورنہ افغانستان ميں انسانی بحران ہولناک ہوسکتا ہے جس سے ستانوے فيصد افغان خطِ غربت سے نيچے جاسکتے ہيں۔

چاليس سال بعد افغانستان ميں امن اور واحد حکومت کا قيام لیکن افغانستان سينٹرل بينک کے سمندر پاردس ارب ڈالرکے اثاثے منجمد ہيں۔

افغانستان میں آئندہ سال کے وسط تک ستانوے فيصد افغان خط غربت سے نيچے جاسکتے ہيں اورخدشہ ہے کہ افغانستان معاشی تباہی سے دوچار ہوسکتا ہے۔

يونائٹڈ نيشنز ڈويلپمنٹ پروگرام رپوٹ ميں خبردار کيا گيا ہے کہ مزيد پچيس فيصد آبادی انسانی بحران کا شکارہوسکتی ہے جبکہ پہلے ہی پچاس فيصد افغان انسانی امداد پرگزارہ کررہے ہيں۔

سربراہ اقوام متحدہ انتونيو گوئتريس نے دنيا پرزورديا ہے کہ طالبان سے بات کرے اور افغان قوم سے يکجہتی کا اظہار کرے۔

يواين نمائندہ خاص ڈيبورا ليونزنے سلامتی کاؤنسل پرزورديا ہے کہ اگرافغانستان ميں معاشی اور سياسی ابتری سے بچنا ہے تو منجمد فنڈزفوری جاری کيے جائيں۔

افغان کرنسی تيزی سے گررہی ہے خوراک اور تيل مہنگا ہورہا ہے اور پرائيوٹ بينکوں سے کيش ختم ہورہا ہے جس سے تنخواہيں دينے کے ليے فنڈز تک ميسرنہيں۔

ڈيبورا ليونزنے بتايا کہ تيرہ ستمبر کو جينيوا ميں اعلٰی سطح کی کانفرنس بلائی جارہی ہے گے اس ميں افغان عوام کے ليے امداد کی ضمانتيں يقينی بنائی جائيں گی جس کی سربراہی سيکريٹری جنرل يواين کريں۔

UNITED NATION

Tabool ads will show in this div