یہ فخرکی بات نہیں: اقراءعزیزکی پوسٹ پرشرمیلافاروقی کا تبصرہ

یاسراوراقراء کےبیٹے کی پیدائش23 جولائی کوہوئی

پیپلز پارٹی سے تعلق رکھنے والی سیاستدان شرمیلا فاروقی نے اداکارہ اقراء عزیز کی پوسٹ پرتبصرہ کرتے ہوئے انہیں بتایا ہے کہ اس میں فخرکرنے کی کوئی بات نہیں۔

اقراء نے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر یاسر کی تصویر شیئر کی تھی جس میں وہ بیٹے کے کپڑے تبدیل کررہے ہیں۔

بچے کی ذمہ داریوں میں ہاتھ بٹانے پر خوشی کااظہار کرنے والی اقراء نے کیپشن میں لکھا 'کام پر جانے سے پہلے پیمپر اور کپڑے تبدیل کرنے کا سیشن'، اداکارہ نے بتایا تھا کہ یاسر نے پہلی بار کبیرکے کپڑے تبدیل کیے ہیں اور مجھے ان پرفخر ہے۔

یاسر کا شکریہ ادا کرتے ہوئے اقراء نے مزید لکھا تھا، آپ نے زندگی کے اس نئے مرحلے میں میری بہت مدد کی ہے۔ ڈائپرتبدل کرنے سے لے کر میرے آرام کےدوران اسے سنبھالتے ہوئے اور مجھے ناشتہ بنا کر دیتے ہوئے'۔

یاسرحسین نے جواب میں پُرمزاح انداز میں لکھا کہ اگر انہیں یہ تصویر کھینچنے کاعلم ہوتا تو کوئی اچھا پوز ہی بنا لیتے۔

بے بی شارک ڈوڈوڈو: اقراء اور یاسر کاابرارالحق کو جواب

اس پوسٹ پر جہاں سعدیہ غفار ، عائشہ عمرسمیت بہت سی شبزسیلیبرٹیز نے اس جوڑی کو سراہا وہیں شرمیلا فاروقی نے ان خصوصیات کو ہراچھے باپ کی پہچان بتاتے ہوئے کہا کہ اس میں فخرکرنے والی کوئی بات نہیں۔

شرمیلا نے لکھا، 'مجھے خوشی ہے کہ آپ کا شوہرکام کررہا ہے لیکن اس میں فخر کرنے کی یا کوئی خاص بات نہیں۔ تمام اچھے شوہر اپنے بچوں کیلئے ایسا کرتے ہیں ۔ میرے شوہر بیٹے کو نہلاتے، ڈائپرتبدیل کرتے اور فیڈر پلاتے ہیں۔ اگر میری طبیعت ٹھیک نہ ہو تو ہمارے بیٹے کو اس کے پری اسکول چھوڑنے جاتے ہیں اور انہیں ایسا کرنا بہت پسند ہے '۔

پی پی رہنما نے اس تبصرے سے  واضح کیا کہ بچے کی ذمہ داریاں بانٹنا والدین کا کام ہے لیکن جب باپ بچے کے بنیادی کاموں میں ماں کی مدد کرے تو کیسے اس بات کو غیرمعمولی سمجھا جاتا ہے۔

بیٹے کی پیدائش کے بعد سے یاسراکثر اس حوالے سے بات کرتے نظرآتے ہیں کہ ماؤں کے لیے اپنے بچوں کی پرورش کرنا کتنا مشکل ہے اوریہ بات غلط ہے کہ ان کی پرورش کے طریقہ کار پر سوالات اٹھائے جائیں۔

اٹھائیس دسمبر 2019 کو کراچی میں شادی کے بندھن میں بندھنے والے یاسر اوراقراء کے یہاں 23 جولائی 2021 کو بیٹے کی پیدائش ہوئی تھی۔

Sharmila Faruqi

Yasir Hussain

IQRA AZIZ

Tabool ads will show in this div