لاہور میں خواتين سے چھيڑخانی کی ايک اور ويڈيو وائرل

موٹرسائيکل رکشہ پرسوارلڑکيوں کوہراساں کياگيا

خواتين کو ہراساں کرنے کی ايک اور ويڈيو سوشل ميڈيا پر وائرل ہوئی ہے جس ميں ايک اوباش موٹر سائيکل رکشے ميں سوار خاتون کو ہراساں کرتا نظرآرہا ہے۔

ويڈيو ميں ديکھا جا سکتا ہے کہ رش کے باعث رکشے کی رفتار کم ہے اسی دوران ايک اوباش رکشے پر چڑھ کر خاتون کو ہراساں کرتا ہے۔

آئی جی پنجاب نے واقعہ کانوٹس لے کر سی سی پی او سے رپورٹ طلب کر لی اور سی سی ٹی وی کيمروں کی مدد سے ملزموں کی شناخت کا حکم ديا ہے۔

ويڈيو کو فرانزک ليبارٹری بھی بھجواديا گيا ہے، تاہم ابھی تک يہ معلوم نہيں ہوسکا کہ ويڈيو کتنی پرانی ہے۔

خیال رہے کہ لاہور میں 14 اگست کو گریٹر اقبال پارک میں نوجوانوں نے ایک خاتون سے بدتمیزی کی تھی، تاہم اس واقعے کا نوٹس لے لیا گیا ہے اور کئی افراد کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

واقعے کی وائرل ویڈیو میں واضح طور پر دیکھا جا سکتا ہے کہ کیسے تین سے چار سو افراد پر مشتمل ایک ہجوم لڑکی پر حملہ آور ہوتا ہے اور انھیں ہراساں کرتا ہے۔

Minar e Pakistan

Tabool ads will show in this div