کراچی:کورنگی میں 6سالہ بچی کےاغواء میں ملوث ملزم گرفتار

پولیس نےابتدائی رپورٹ عدالت میں جمع کرادی

کرچی کے علاقے کورنگی میں 6سالہ بچی کے اغواء اور ریپ کے بعد قتل کیس میں پولیس نے ایک ملزم ذاکرکو گرفتار کرلیا۔

پولیس کے مطابق ملزم ذاکر بچی کا پڑوسی تھا، ایک گھنٹے تک ملزم بچی کو رکشے میں سیر کرائی، بعدازاں ریپ کے بعد ملزم بچی کوقتل کرکے لاش کچرا کنڈی میں پھینک دی۔

پولیس کی ابتدائی تحقیقاتی رپورٹ کے مطابق بچی کو 27 جولائی کو گلی سے اغوا کیا گیا تھا جبکہ 28 جولائی کو کچرے کے ڈھیر سے بچی کی لاش ملی۔

پولیس کی ابتدائی رپورٹ میں کسی کو نامزد نہیں کیا تھا البتہ ایک ملزم کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ پولیس نے رپورٹ عدالت میں جمع کرادی ہے۔

کراچی: کورنگی میں بچی کا ریپ و قتل، ایک لڑکی لاپتہ

کورنگی نمبر 4 پاک غوثیہ روڈ پر کچرا کنڈی سے6 سالہ بچی کی تشدد زدہ لاش ملی تھی، کمسن بچی گزشتہ اُس وقت لاپتہ ہوئی جب علاقے ميں بجلی نہيں تھی۔

پولیس کی جانب سے کرائی پوسٹ مارٹم رپورٹ میں قتل سے پہلے بچی کا ریپ کیے جانے کی بھی تصدیق ہوئی ہے جبکہ اس دوران اس پر بدترین تشدد بھی کیا گیا اور بچی کی گردن کی ہڈی ٹوٹی ہوئی پائی گئی۔

واقعے پر گورنر سندھ عمران اسماعیل نے ایڈیشنل آئی جی کراچی سے رپورٹ طلب کرلی تھی، عمران اسماعيل کا کہنا تھا کہ مہذب معاشرے میں ایسے واقعات ناقابل برداشت ہیں۔

korangi

Tabool ads will show in this div