نورمقدم قتل کیس: ملزم ظاہر جعفر کا موبائل فون برآمد

پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج حاصل کرلی
ISB Noor Murder Case Peshi 24-07 فائل فوٹو

اسلام آباد ميں سابق سفارتکار کی بيٹی نورمقدم کے قتل کيس ميں پوليس نے ملزم ظاہر جعفر کا موبائل فون برآمد کرلیا۔

پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج بھی حاصل کرلی ہے۔

پولیس کے مطابق فوٹیج میں نورمقدم کو پہلی منزل سے نیچے گرتے دیکھا گیا لیکن گارڈ نے ظاہر جعفر کو روکنے کی کوشش نہیں کی۔ ری ہیبلیٹیشن کی ٹیم کافی دیر بعد ملزم کے گھر پہنچی۔

پولیس تاحال ملزم ظاہر جعفر کا دفعہ 164 کا بیان رکارڈ نہیں کروا سکی۔

نورمقدم قتل: ظاہر جعفر کا نام بلیک لسٹ میں شامل

واضح رہے کہ گزشتہ روز وزیر داخلہ شیخ رشید کی ہدایت پر ملزم ظاہر جعفر کا نام بلیک لسٹ کيا گيا۔ وزير داخلہ شيخ رشيد کہتے ہيں کہ ای سی ايل ميں نام ڈالنے کی منظوری وفاقی کابينہ سے لی جائے گی۔

اسلام آباد کے علاقے ایف سیون میں سابق سفیر کی بیٹی نور مقدم کو عید الاضحیٰ سے ایک دن قبل انتہائی سفاک طریقے سے قتل کردیا گیا تھا، پولیس نے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کو گرفتار کرلیا تھا جبکہ اس کے والدین کو بھی حراست میں لیا جا چکا ہے۔

ملزم جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے ہے جسے 28جولائی کو دوبارہ پیش کیا جائے گا۔

NOOR MUKADAM

Tabool ads will show in this div