کوئی ملک مخصوص ویکسین لگوانےکامطالبہ نہیں کرسکتا، ڈبلیو ایچ او

تمام ممالک کوفیصلہ ماننا ہوگا

دنیا کے کسی ملک میں جانے کےلیے اب مخصوص کوویڈ ویکسین کی ضرورت نہیں رہی، عالمی ادارہ صحت نے یہ پابندی ختم کرکے مسافروں کی مشکل آسان کردی۔

عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ ڈبلیو ایچ او سے منظور شدہ تمام ویکسینز دنیا کے تمام ممالک میں قابل قبول ہوں گی، کوئی ملک مخصوص ویکیسن لگوانے کا مطالبہ نہیں کرسکتا۔

پاکستان میں سائنو فارم اور سائنو ویک ویکسین لگوانے والوں کےلیے خبر خوش آئند ہے کہ ڈبلیو ایچ او کی منظور شدہ ویکسین لگنے کےبعد مسافر کسی بھی ملک کر سفر کرسکتے ہیں۔

عالمی ادارہ صحت کے اعلان کے بعد اب دیکھنا ہے کہ وہ ممالک جو مخصوص ویکسین کی شرط رکھ رہے تھے کیا وہ عالمی ادارہ کےاس علامیےکی بات پرعمل کرتے ہیں یا نہیں۔

دوسری جانب پاکستان میں کرونا وائرس کے باعث مزید 25افراد انتقال کرگئے، ملک میں اموات 22ہزار 452 ہوگئیں۔ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 823 نئے کیسز رپورٹ ہوئے۔

یاد رہے کہ برطانیہ نے کرونا وائرس ایس او پیز کو مکمل ختم کرنے کا اعلان کردیا ہے۔

COVID-19

Tabool ads will show in this div