سندھ میں پرائمری اسکول کھولنے کا فیصلہ

سندھ میں درگاہیں 28 جون سے کھولنے کا فیصلہ

سندھ میں پرائمری اسکول کھولنے کا فیصلہ کرلیا گیا ہے۔

ہفتے کو کراچی میں کرونا وائرس پر سندھ کی صوبائی ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ سندھ میں پرائمری اسکول 21 جون سے کھول دئیے جائیں گے۔ سندھ میں درگاہیں 28 جون سے کھولنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ امیوزمنٹ پارکس اور انڈور جمز 28 جون سے کھولنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اجلاس میں بتایا گیا کہ کرونا وائرس کی تشخیصی شرح 3.9 ہوگئی ہے تاہم کراچی میں تشخیصی شرح 8.08 اور حیدرآباد 4.3 فیصد ہے اور کیسزمیں کمی آرہی ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ یہ کمی تب تک ہوتی رہے گی جب تک عوام ایس او پیز پر عمل کرتے رہیں گے۔

سندھ میں 9ویں اور11ویں کےامتحانات جولائی اگست میں ہونگے،سعیدغنی

سندھ کی ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق کراچی شرقی میں 14 فیصد، جنوبی میں 10 فیصد کیسز آئے ہیں۔کراچی وسطی میں 9 فیصد، غربی 8 فیصد، ملیر 7 فیصد ، کورنگی 7 فیصد اور سکھرمیں 7 فیصد کیسز ہیں۔ سندھ میں جون میں 263 کرونا مریض انتقال کرگئے ہیں۔

واضح رہے کہ 3 روز قبل محکمہ تعلیم سندھ کی اسٹیئرنگ کمیٹی کے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ اس سال 9 ویں اور فرسٹ ائیر کے امتحانات جولائی اور اگست میں منعقد کئے جائیں گے جبکہ اس سال پریکٹیکل امتحانات بھی لئے جائیں گے۔

سندھ: تعلیمی سرگرمیاں 7جون سے بحال کرنے کا اعلان

پانچ روز قبل وزیرتعلیم سندھ سعید غنی نے چھٹی سے آٹھویں جماعت کی کلاسز 50 فیصد حاضری کے ساتھ  منگل 15 جون سے شروع کرنے کا اعلان کیا تھا۔ تمام کلاسز میں حاضری کا تناسب 50 فیصد ہوگا اور اسکولز کے تمام عملے کی ویکسینیشن ہونا لازمی ہوگا۔

اس سال پريکٹيکل امتحانات نہیں لئے جائیں گے،سندھ حکومت

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے محکمہ صحت کو اگلے 3 مہینوں میں 18 ملین لوگوں کو ویکسین لگانے کا ہدف دے دیا ہے۔

Tabool ads will show in this div