کالمز / بلاگ

ڈیمانڈ اینڈ سپلائی

سو لفظوں کا کالم

اسلم مستری  کے ہاں بیٹے کی پیدائش

طلب بڑھنے پر چاچا شامو نے آٹے کے دام  بڑھادئیے۔

اسلم کے ہاں ایک اور بچے کا جنم

آٹے کی قیمت میں مزید اضافہ۔

بچے بڑے ہوئے تو، روٹیاں بھی بڑی ہوگئیں، پھر ایک سے، دو دو ہوگئیں۔

 مانگ بڑھنے  پر چاچے شامو نے آٹے کے نرخ  میں اضافہ کردیا۔

اگلے روز دکان پر بینر لگا ہوا تھا ۔۔۔ آٹے کی قیمت میں 2 روپے کمی

اور

 اسلم مستری کے گھر کے باہر دریاں بچھی ہوئی تھی

میں نے پوچھا کیا ہوا؟

 اسلم مستری کی ماں مرگئی۔

SAMAA Blog

Tabool ads will show in this div