ڈنمارک نےایسٹرا زینیکا ویکسن لگانا بند کردی

ڈیڑھ لاکھ ٹیکے پہلے ہی لوگوں کو لگائے جاچکے ہیں
فوٹو: بزنس انسائیڈر
فوٹو: بزنس انسائیڈر
فوٹو: بزنس انسائیڈر

ڈنمارک آکسفورڈ کی ایسٹرا زینیکا ویکسین کو مکمل طور پر ترک کرنے والا پہلا ملک بن گیا۔

ڈنمارک کے صحت حکام کا کہنا ہے کہ فیصلےکے بعد ملک میں موجود ایسٹرا زینیکا کے 24لاکھ ٹیکوں کی فراہمی روک دی جائے گی۔

ڈینش حکام نےمزید کہا کہ فیصلے سے ڈنمارک میں جاری ویکسینیشن مہم پر منفی اثر پڑے گا اور ٹیکوں کی فراہمی میں کچھ ہفتوں کا تعطل آئے گا تاہم مختلف ممالک میں ایسٹرا زینیکا ویکسین لگنےکے بعد دماغ میں خون جمنے کےشدید ضمنی اثرات سامنے آئے ہیں۔

یورپ میں دوائیوں کے معیار کی نگرانی کے ادارے ’یورپین میڈیسن ایجنسی‘ نے گزشتہ ہفتے کہا تھا کہ بعض مریضوں میں ٹیکہ لگوانے کےبعد’بلڈ کلوٹنگ‘ ہورہی تھی جس کےبعد ویکسین پرسوالیہ نشان لگنا شروع ہوئےتھے۔

یاد رہے کہ یورپ میں کئی ممالک پہلے ہی ایسٹرا زینیکا ویکسن لگانے کی مہم معطل کرچکے ہیں۔

ڈنمارک میں لگ بھگ 10لاکھ لوگوں کو کرونا سے بچاؤ کی ویکسین لگائی جاچکی ہے، جن میں ڈیڑھ لاکھ ٹیکے ایسٹرا زینیکا ویکسن کے تھے۔

DENMARK

COVID-19

COVID NEWS

VACCINE UPDATES

AstraZeneca Vaccine

Tabool ads will show in this div