صدرنےایچ ای سی ترمیمی آرڈیننس2021 کی منظوری دیدی

چیئرمین کی تعیناتی 2 سال کیلئے ہوگی
فائل فوٹو
فائل فوٹو
فائل فوٹو

صدر مملکت نے ہائر ایجوکیشن کمیشن ترمیمی آرڈیننس2021 کی منظوری دے دی ہے۔

آرڈیننس کے تحت ایچ ای سی کی خود مختاری ختم کردی گئی ہے، جس کا اطلاق 26 مارچ سے ہوگا۔ آرڈیننس کے مطابق ایچ ای سی کے تمام فیصلے وزارت تعلیم کی منظوری سے مشروط ہونگے۔

چیئرمین ایچ ای سی کی تعیناتی 2 سال کیلئے ہوگی، جب کہ ایچ او سی ممبران کی تعیناتی 4 سال کیلئے ہوگی۔

آرڈیننس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ چیئرمین اور ممبران ایچ ای سی مزید ایک ٹرم بھی لے سکیں گے۔ آرڈیننس ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے نام سے ہی کام کرتا رہے گا۔

واضح رہے کہ حکومت نے سابق چیئرمین ایچ ای سی طارق بنوری کو 26 مارچ کو عہدے سے ہٹایا تھا۔ جس کے بعد وفاق کی جانب سے ہائیر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) کو باقاعدہ طور پر وزارتِ تعلیم کے ماتحت کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

ایچ ای سی سے متعلق آرڈیننس صدر کو منظوری کیلئے بھیجا گیا تھا، جس کے بعد آج 8 اپریل کو آڑڈیننس جاری کیا گیا ہے۔

hec

Tabool ads will show in this div