آمدن سے زائد اثاثوں کا کیس، خواجہ آصف کو پیش نہیں کیا گیا

ملزم کو کووڈ19 سے بچانا ہے،اس لیےعدالت پیش نہیں کر رہے

لاہور کی احتساب عدالت میں جمعہ کوخواجہ آصف کيخلاف آمدن سےزائد اثاثےکيس کی سماعت ہوئی۔ليگی رہنما کو پيش نہ کيا گيا اورجیل حکام نے جناح اسپتال کےڈاکٹرز کی رپورٹ پیش کی جس کے مطابق ملزم کو کووڈ19 سے بچانا ہے،اس لیےعدالت میں پیش نہیں کررہے ہیں تاہم عدالت نے رپورٹ مسترد کردی۔

احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے ریمارکس دئیے کہ یہ کوئی بات نہیں کہ ایک بڑا آدمی ملزم بن گیا تو اسے کووڈ کی وجہ سے پیش نہیں کرنا۔جب عدالت کہتی ہے کہ پولیس کرونا کی وجہ سے عدالت کے باہر حالات کنٹرول کرے تو تمسخر اڑایا جاتا ہے۔ایسی رپورٹ دوبارہ آئی توسب کے خلاف قانونی کاروائی ہوگی۔8 اپریل کو ملزم کو ہر صورت پیش  کيا جائے۔

فاضل جج  کےاستفسار کرنے پر تفتیشی نے بتایا کہ تفتيش ابھی چل رہی ہے۔جج جواد الحسن نے کہا کہ کیا تفتیش مکمل کرنے کے لیے 25 سال چاہیں،سیدھا کہو کہ بساط بچھ چکی ہے،کیوں عدالتوں کو پریشان کیا ہے، اس گراؤنڈ پرجب ضمانت ہوجائے گی تو پھر بیٹھے رہنا۔

KHAWAJA ASIF

Tabool ads will show in this div