امریکا میں نسل پرستی ایک خوفناک حقیقت ہے،جو بائیڈن

متاثرین کو انصاف ملے گا،اٹلانٹا میں خطاب
Mar 20, 2021
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/03/NF-Biden-on-Atlanta-Shooting-Pkg-20-03-Hasan.mp4"][/video]

امریکی صدر جوبائيڈن نے ملک میں نسل پرستی کا اعتراف کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ايک خوفناک حقيقت ہے اور ہمیں اس سے نمٹنا ہوگا۔

جو بائیڈن نے اٹلانٹا میں اپنے خطاب کے دوران ایشیائی خواتين کے قتل کی مذمت کی اور کہا کہ ايسے واقعات سے ہماری تاريخ بھری پڑی ہے لیکن اب خاموشی توڑنی ہوگی کیوں کہ یہ جرم میں شراکت کے مترادف ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ 7 ایشیائی خواتين کو نسلی نفرت کے سبب قتل کيا گیا جس کی ہم شديد مذمت کرتے ہيں اورمتاثرہ خاندانوں سے ہمارا وعدہ ہے کہ انہیں انصاف ملے گا۔

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ ایشیائی نژاد امريکی مشکل ميں اور خوفزدہ ہيں کیوں کہ ان پر حملے کیے جارہے ہیں اور وہ زبانی اور جسمانی دونوں طرح سے نشانہ بن رہے ہیں جس کے بہت سارے واقعات ریکارڈ پر آچکے ہیں۔

یاد رہے کہ اٹلانٹا ميں 16 مارچ کو ايک نسل پرست نوجوان نے فائرنگ کرکے 7 ايشيائی خواتين سميت آٹھ افراد کو قتل کرديا تھا۔

JOE BIDEN

Atlanta Shooting

anti-Asian Racism

Tabool ads will show in this div