شہبازگل پرسیاہی پھینکنے کا معاملہ،ملزمان کا ریمانڈ منظور

حملہ کرنے والوں کو معاف کرتے ہیں
[caption id="attachment_2206944" align="alignnone" width="680"] فوٹو: اے پی پی[/caption]

لاہورمیں جوڈیشنل مجسٹریٹ نے شہبازگل پرسیاہی اور انڈے پھینکنےوالے تینوں ملزمان کا 3 دن کا جسمانی ریمانڈ منظورکرلیا۔

وزیراعظم پاکستان کےمعاون خصوصی شہبازگِل پرگندے انڈے اورسیاہی پھینکنےکےکیس کی سماعت ہوئی۔ ملزمان میاں غلام عباس،میاں عتیق اور طارق جٹ کو جوڈیشنل مجسٹریٹ وسیم افتخار کی عدالت میں پیش کیا گیا۔عدالت کوبتایا گیا کہ ملزمان کے کیخلاف تھانہ انارکلی میں مقدمہ درج ہوا۔

پولیس نےاستدعا کی کہ عدالت ملزمان سے تفتیش اور برآمدگی کے لیے جسمانی ریمانڈ منظور کرے۔استغاثہ نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان نےگزشتہ روزاحاطہ عدالت میں شہباز گل پرانڈے اور سیاہی پھینکی۔سیاہی سے شہباز گل کی آنکھ متاثرہوئی۔عدالت میں ملزمان کا کہنا تھا کہ ہمارے حوصلے بلند ہیں اورہم ان سے ڈرنے والےنہیں ہیں۔ہم نےکوٸی جرم نہیں کیاہے۔

سیاہی اور انڈے پھینکنے والےملزم غلام عباس نے شہبازگل پر مقدمہ درج کرنے کی مجسٹریٹ وسیم افتخار کے روبرو دائر کردی ہے۔غلام عباس نےموقف اختیار کیا کہ ان پرتشدد ہوا اس لئےان کا بیان ریکارڈ کرکے شہبازگل پر مقدمہ درج کیا جائے۔غلام عباس نےبتایا کہ انھوں نےپولیس کواپنا بیان بھی دیا لیکن ان کا بیان ریکارڈ نہیں کیا گیا۔غلام عباس کا مزید کہنا تھا کہ شہباز گل نے اپنے ساتھیوں کے ذریعےان کو پکڑنے اور تشدد کا کہا۔

 مزید پڑھیں:شہبازگل پرسیاہی پھینکنے کامعاملہ،عدالت کا ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کا حکم

اس کےعلاوہ لاہور ہائی کورٹ نے شہباز گل پر سیاہی اور انڈے پھینکنے کے معاملے کا نوٹس لے لیا۔ چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ کا کہنا تھا کہ شہباز گل پر سیاہی اور انڈے پھیکنے پر تشویش ہے۔

شہبازگل نےٹویٹ کرتےہوئے کہا کہ وہ حملہ کرنے والوں کو معاف کرتے ہیں اور کسی کو جیل میں نہیں دیکھنا چاہتے۔

اس سےقبل،منگل کو احتساب عدالت کے باہرشاہد خاقان عباسی نےمیڈیا سے بات کرتےہوئےبتایا کہ شہباز گل کومیں نہیں جانتا لیکن ان پر سیاہی پڑی توایسا نہیں ہونا چاہئےتھا۔ انھوں نے کہا کہ سنا ہے کہ یہ شخص لوگوں کو گالیاں دیتا ہے،جب گالیاں دی جائیں گی تو ایسا ہونےکا خدشہ رہتا ہے۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ پہلے کہہ چکا ہوں کہ مجھے ایک گالی دو گے تومیں دس دوں گا اورایک بار ہاتھ اٹھاؤ گے تو دس باراٹھاؤں گا۔

واضح رہےکہ بروز پیر 15 مارچ کو وزیراعظم عمران خان کے معاونِ خصوصی برائے سیاسی روابط شہباز گل لاہور ہائی کورٹ میں مقدمے کی سماعت کے لیے پہنچے تھے تو احاطے میں ان پر انڈے اور سیاہی پھینکی گئی۔ان پرپھینکےجانےوالےانڈےساتھ چلنےوالےپولیس اہلکارکی چھتری پر لگے۔اس کے ساتھ ہی ان کی جانب سیاہی بھی پھینکی گئی۔موقع پرموجود پولیس اہلکاروں نے شہباز گل پر سیاہی اور انڈے پھیکنے والے افراد کوحراست میں لے لیا۔

SHAHBAZ GILL

Tabool ads will show in this div