استعفوں پر غور، پی ڈی ایم کا اہم اجلاس آج ہوگا

زرداری ویڈیو لنک کے ذریعے شریک ہونگے
فائل فوٹو
فائل فوٹو
فائل فوٹو
فائل فوٹو
فائل فوٹو

حکومت مخالف اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موؤمنٹ (پی ڈی ایم) کا اہم اجلاس آج اسلام آباد میں ہوگا۔

اجلاس کی صدارت پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کریں گے۔ اجلاس میں اپوزیشن کے دیگر قائدین بھی شریک ہونگے۔ آج ہونے والے اجلاس میں حکومت کے خلاف لانگ مارچ اور استعفوں کی تجویز پر مشاورت ہوگی۔

اجلاس میں ملک کی سیاسی صورت حال پر مشاور ت کی جائے گی۔ چئیرمین، ڈپٹی چئیرمین سینیٹ الیکشن میں شکست پر تمام جماعتیں رپورٹ پیش کرینگی۔

اجلاس میں سابق صدر آصف علی زرداری وڈیو لنک کے ذریعے شرکت کریں گے۔ ووٹ کیسے مسترد ہوئے، قائدین اس پر بھی غور کریں گے۔ ڈپٹی چئیرمین کو کم ووٹ ملنے پر بھی جے یو آئی کے تحفظات دور کئے جائیں گے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل میڈیا سے گفتگو میں جے یو آئی اور پی ڈی ایم سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کے اجلاس میں لانگ مارچ کی حتمی حکمت عملی طے کریں گے اور پارلیمنٹ سے استعفوں کو بھی ایجنڈے پر رکھا ہے۔

انہوں نے کہا کہ میری ذاتی رائے میں اگر ہم اس اسمبلی سے استعفے نہیں دیتے تو شاید لانگ مارچ کی زیادہ افادیت نہ ہو۔ لانگ مارچ کی ٹائمنگ پی ڈی ایم طے کرے گا اور لانگ مارچ کوئی ایک دن کا نہیں ہوا، 26 مارچ کے لانگ مارچ پر سب کا اتفاق ہے اور کرونا ہمارا راستہ نہیں روک پائے گا۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ آج قوم کو سمجھ آگئی ہے کہ اداروں پر تنقید اور حملہ کرنا کیا ہوتا ہے؟ حکومت کو الیکشن میں ووٹ نہیں ملے تو الیکشن کمیشن کا کیا قصور؟ آپ کی بدترین دھاندلی کے باوجود آپ کو ووٹ نہیں ملے۔

مریم نواز کا کہنا تھاکہ استعفوں کا معاملہ کل پی ڈی ایم اجلاس میں کلیئر ہوجائے گا، جو استعفوں پر نہیں مانتے انہیں منانے کی کوشش کریں گے، ہم نے بھی ان کی بات مانی ہے، پی ڈی ایم 10 جماعتوں کا اتحاد بڑے ایجنڈے پر متحد ہے۔

SENATE

Tabool ads will show in this div