شہباز شریف کی پیشی، پولیس سے الجھنے پر 2افراد گرفتار

احتساب عدالت کے باہرسے خاتون کوبھی حراست میں لیاگیا، پولیس
فوٹو: آن لائن
فوٹو: آن لائن
فوٹو: آن لائن

لاہور کی احتساب عدالت ميں شہباز شریف کی پیشی پر پولیس اور ليگی کارکن لڑپڑے۔ پولیس نے خاتون سمیت 2 افراد کو گرفتار کرلیا۔

شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو منی لانڈرنگ کیس میں احتساب عدالت لاہور میں پیش کیا گیا، جہاں کارکن نعرے لگاتے گاڑی کے آگے آگئے۔

اس دوران پولیس سے الجھنے پر ایک مرد اور خاتون کارکن کو حراست میں لے لیا گیا۔

گرفتار خاتون کو چھڑانے کیلئے ہر پیشی پر آنیوالا لیگی کارکن عتیق ڈی ایس پی کے گھٹنے پکڑتا رہا، جس پر پولیس نے خاتون کو چھوڑا لیکن دوبارہ پکڑ لیا۔

خاتون کا کہنا ہے کہ انہوں نے کسی کو نہیں مارا۔

سماعت کے موقع پر سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی، سابق وزیر حنیف عباسی اور مشاہد اللہ خان کے بیٹے افنان اللہ نے شہباز شریف سے ملاقات کی۔

شاہد خاقان عباسی کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ ڈھائی سال ہوگئے کیس آج تک چل رہا ہے، یہ کیس ہے کیا؟، کسی کو نہیں پتہ۔

احتساب عدالت نے نیب کے گواہوں کو جرح کیلئے دوبارہ 18 مارچ کو طلب کرلیا۔

Tabool ads will show in this div