وزیراعظم کا سی پیک کے ذریعے رابطوں کو بڑھانے پرزور

سری لنکن وزیراعظم نے استقبال کیا
Feb 23, 2021
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/02/MZ-IK-in-Sri-lanka-Nat-23-02.mp4"][/video]

وزیراعظم عمران خان سرکاری دورے پر سری لنکا پہنچ گئے ہیں جہاں ان کے ہم منصب مہندا راجہ پکسا نے ان کا استقبال کیا اور وزیراعظم کو توپوں کی سلامی بھی پیش کی گئی۔

وزیراعظم 2 روزہ سرکاری دورے پر سری لنکا پہنچ گئے ہیں۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد اور معاون خصوصی ذوالفقار عباس بخاری بھی وزیراعظم کے ہمراہ موجود ہیں۔

کولمبو پہنچنے پر سری لنکن ہم منصب نے ایئرپورٹ پر وزیراعظم کا ریڈکارپٹ استقبال کیا جبکہ وزیراعظم کے اعزاز میں استقبالیہ تقریب کا بھی انعقاد کیا گیا جس میں عمران خان کو توپوں کی سلامی دی گئی۔

استقبالیہ تقریب میں دونوں ممالک کے قومی ترانوں کی دھن بجائی گئی اور وزیراعظم عمران خان کو گارڈ آف آنر پیش کیاگیا جبکہ سری لنکن فوج کے دستوں نے بھی وزیراعظم کو سلامی دی۔

وزیراعظم کی آمد پر کولمبو ایئر پورٹ پر ویلکم وزیراعظم عمران خان کے بورڈ جبکہ کولمبو کی شاہراہ پر پاکستان کے پرچم آویزاں تھے۔ منصب سنبھالنے کے بعدعمران خان کا سری لنکا کا یہ پہلا دورہ ہے۔

استقبالیہ تقریب کے بعد پاکستان اور سری لنکا کی قیادت کے درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے جس میں پاکستانی وفد کی قیادت وزیراعظم عمران خان جبکہ سری لنکن وفد کی قیادت وزیراعظم مہندا راجہ پکسا کر رہے ہیں۔ مذاکرات میں سرمایہ کاری، صحت اور تعلیم سمیت مختلف شعبوں میں تعاون پر گفتگو ہوئی اور دونوں ممالک کے مابین مختلف شعبوں میں مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط ہوئے۔

مذاکرات کے بعد سری لنکن ہم منصب کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ شاندارمیزبانی پر سری لنکن ہم منصب کامشکو رہوں۔ سری لنکا سے بہت سی یادیں وابستہ ہیں۔ سری لنکا پاکستان کے ذریعے اپنےعلاقائی روابط کو فروغ دے۔ پاکستان سی پیک کاجزوہے جو روابط کے فروغ کی نئی راہیں کھولے گا۔

واضح رہے کہ عمران خان سری لنکا کے وزیراعظم مہندا راجا کی دعوت پر دورہ کر رہے ہیں۔ وزیراعظم کا سری لنکا کا دورہ 2 دن پر مشتمل ہوگا۔ دورے کے دوران وزیراعظم عمران خان سری لنکن صدر اور ہم منصب سے ملاقاتیں کریں گے۔ ملاقوں میں تجارت، سرمایہ کاری سمیت دیگر امور میں دو طرفہ تعاون پربات ہوگی جبکہ دونوں ممالک کے درمیان مختلف امور میں مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط ہوں گے۔

وزیراعظم جوائنٹ ٹریڈ اینڈ انویسٹمنٹ کانفرنس میں بھی شرکت کریں گے۔ عمران خان کا سری لنکا کی پارلیمنٹ سے خطاب بھی شیڈول میں شامل تھا مگر دورے سے ایک روز قبل سری لنکن حکومت نے اس کو شیڈول سے نکال دیا۔

PM Khan

Tabool ads will show in this div