اسپتال عملے نےمیڈیکل ریپ کوکان پکڑوا کر اٹھک بیٹھک کروادی

تحقیقاتی کمیٹی قائم

ملتان انسٹیٹیوٹ اف کارڈیالوجی میں میڈیکل ریپ کو کان پکڑوا کر اٹھک بیٹھک کروانے کی مبینہ ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی۔ دوا ساز کمپنیوں کے نمائندوں نے اسپتال انتظامیہ کے ناروا سلوک کے خلاف مظاہرہ کیا۔

ملتان کارڈیالوجی اسپتال کے سینٹری انسپکڑ نے میڈیکل ریپ عثمان کو کمرے میں بند کرکے کان پکڑوا کر اٹھک بیٹھک کروائی اور اس کی ویڈیو بناکر سوشل میڈیا پر وائرل کردی۔ اس واقعہ کے خلاف میڈیکل ریپس نے اسپتال کے باہر احتجاجی مظاہرہ کیا۔

ماثرہ میڈیکل ریپ عثمان نے بتایا کہ میں اپنی والدہ کو چیک کروانے لایا تھا۔ انہوں نے مجھے کہا کہ آپ میڈیکل ریپ ہیں، مجھے اندر کمرے میں لے گئے۔ وہاں سینٹری انچارج انیس نے میری ساتھ بدتمیزی کی برا بھلا کہا اور تھپڑ تک مارے۔

ملتان انسٹی ٹیوٹ اف کارڈیالوجی کے ایم ایس ڈاکٹر رفیق اختر نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے تحقیقات کیلئے کیمٹی تشکیل دے دیدی۔ انہوں نے کہا کہ بدسلوکی کی کسی کو اجازت نہیں، چاہے ہمارے کوئی ممبر ہی کیوں نہ ہو، یہ کسی کو حق نہیں۔ اس معاملے کو دیکھیں گے اور تہہ تک جائیں گے۔

میڈیکل ریپ عثمان اور اس کے ساتھیوں نے مطالبہ کیا ہے کہ اس غیرانسانی سلوک پر ذمہ داران کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے۔

Health Workers

Tabool ads will show in this div