کراچی:سی ٹی ڈی آپریشن میں داعش کا سہولت کار گرفتار

ملزم کوکینٹ اسٹیشن کراچی سے گرفتارکیاگیا
Jan 18, 2021

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/CTD-Raja-Umer-Khatab-PC-Khi-new-18-01.mp4"][/video]

کراچی کے علاقے کینٹ اسٹیشن کے قریب محکمہ انسداد دہشت گردی نے آپریشن کے دوران کالعدم تنظیم داعش کیلئے سہولت کاری کرنے والے ملزم کو گرفتار کرلیا۔

کراچی میں مشترکا پریس کانفرنس سے خطاب میں سی ٹی انچارج راجہ عمر خطاب اور ڈی آئی جی  سی ٹی ڈی عمر شاہد کا کہنا تھا کہ سی ٹی ڈی کو انٹیلی جنس ذرائع سے اطلاع موصول ہوئی تھی کہ کچھ لوگ پاکستان میں فنڈز جمع کرکے بیرون ملک داعش کے دہشت گردوں کو بھیج رہے ہیں، جس پر قانون نافذ کرنے والے اداروں نے کارروائی کرکے ایک ملزم کو گرفتار کیا، جس سے 2 موبائل فونز برآمد ہوئے۔

حکام کے مطابق ملزم کے موبائل فونز کی فرانزک چانچ سے پتا چلا کہ ملزم داعش کو بیرون ملک رقوم بھیجنے میں ملوث تھا۔

ملزم کا تعلق شام اور پاکستان میں دہشت گردوں کے اہل خانہ سے بھی تھا۔ جو رقم ایزی پیسہ کے ذریعے لینے اور دینے کا کام کیا کرتا تھا۔ ملزم کی شناخت محمد عمر بن خالد کے نام سے کی گئی ہے، ملزم کے دوسرے ساتھی کا نام ضیا ہے، جس کا تعلق حیدر آباد سے ہے۔

سی ٹی ڈی حکام کا مزید کہنا تھا کہ ملزم عمر بن خالد این ای ڈی یونی ورسٹی کا طالب علم ہے اور اس یہ اس کا آخری سال تھا۔ ملزم سے مزید تفتیش جاری ہے۔

عمر شاہد نے کہا کہ بٹ کوائن ٹیرر فائننسنگ میں استعمال ہونا شروع ہوگیا ہے۔ گرفتار ملزم حوالہ ہنڈی کے ذریعے رقوم بٹ کوائن میں تبدیل کر کے باہر بھیجتا تھا۔ جہادی فیملیز نے اپنے ٹوئٹر اکاونٹ بنوائے ہوئے ہیں، جہاں سے پیسوں کی ڈیمانڈ کی جارہی تھی۔

Tabool ads will show in this div