کم فیس والےپرائیویٹ اسکولوں کو قرضے دینے کا فیصلہ

معاملہ کابینہ کے سامنے رکھا جائے گا

وزارت تعلیم نے کرونا کےباعث معاشی مشکلات کا شکار کم فیس والےپرائیویٹ اسکولوں کو قرضے دینے کا فیصلہ کرلیا۔اگلے اجلاس میں معاملہ کابینہ کے سامنے رکھا جائے گا۔

قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائےتعلیم کا اجلاس نجیب الدین اویسی کی زیرصدارت ہوا۔پارلیمانی سیکرٹری برائے تعلیم وجیہہ اکرم نے بتایا کہ کرونا کے دوران پرائیویٹ اسکولز مشکلات کا شکار رہے،کم فیس والےاسکولوں کو قرضے دینے کا معاملہ کابینہ کے آئندہ اجلاس میں اٹھایا جائے گا۔

ہائیرایجوکیشن کمیشن حکام نے بتایا کہ ایچ ای سی کوپورا بجٹ نہیں دیا جاتا، ہمیں وہی پرانا بجٹ دیا گیا ہے،جامعات ہم سے گرانٹ مانگ رہی ہیں اورہم کہاں سے پورا کریں،کمیٹی حکومت کو تجویز کرے کہ ہمارا بجٹ بڑھایا جائے۔

ایچ ای سی نے بتایا کہ آن لائن سسٹم میں بہتری آئی ہے،آغاز میں صرف 23 کورس آن لائن پڑھائے جا سکتے تھے اور صرف 2 جامعات میں آن لائن لرننگ سسٹم تھا جوکہ اب بڑھ کر 57 فیصد تک چلا گیا ہے۔

کمیٹی ممبرمہنازعزیزکا کہنا تھا کہ وی سیزاورطلباء سےبھی پوچھا جائے کہ ان کو کیا مسائل ہیں،طلباء کے مسائل بھی اگلی میٹنگ میں پیش کیے جائیں۔

Tabool ads will show in this div