سابق صدرمشرف کیخلاف آرٹیکل6کی کارروائی،خط وزارت قانون کوارسال

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ
اسلام آباد : سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف غداری کے مقدمے کے ٹرائل کیلئے وزارت داخلہ نے وزارت قانون کو خط بھجوا دیا۔ وزارت قانون خصوصی عدالت کے قیام کیلئے سپریم کورٹ سے رابطہ کرے گی۔

وزارت داخلہ کی جانب سے وزارت قانون کو خط لکھا گیا ہے کہ حکومت تین نومبر کے اقدامات پر سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف غداری کا مقدمہ چلانا چاہتی ہے۔ اس کے لیے انیس سو چھہتر کے ایکٹ کے تحت خصوصی عدالت قائم کی جائے اور سپریم کورٹ آف پاکستان سے خصوصی عدالت کے جج صاحبان کے نام مانگے جائیں جس پر وزارت نے خط کا مسودہ تیار کر لیا ہے اور سپریم کورٹ سے استدعا کی گئی ہے کہ پرویز مشرف کیخلاف آرٹیکل چھ کے تحت مقدمہ چلانے کیلئے خصوصی عدالت قائم کی جا رہی ہے جس کے لیے تین جج صاحبان کے نام دیئے جائیں۔

وزارت قانون کے ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق صدر پرویز مشرف کیخلاف غداری کا مقدمہ سننے کیلئے خصوصی عدالت اسلام آباد ہائیکورٹ میں قائم کرنے پر غور کیا جا رہا ہے۔اس کے لیے عدالت عالیہ کو خط بھی لکھا جائے گا۔وزارت قانون کے حکام کا کہنا ہے کہ پرویز مشرف کیخلاف غداری کا مقدمہ ماضی کے مقدمات کی طرح ان کے فارم ہاؤس میں نہیں سنا جائے گا۔

دوسری جانب سیکریٹری قانون آفس کا کہنا ہے کہ مشرف کيخلاف کارروائی سے متعلق خط موصول ہونے کا علم نہیں،سیکریٹری قانون اسحاق ڈارکےساتھ میٹنگ میں ہیں، خط موصول ہونے سے متعلق سیکریٹری قانون ہی بہتر بتا سکیں گے۔ سماء

european

کیخلاف

doping

criticize

Tabool ads will show in this div