براڈشیٹ نے نیب کا دعویٰ غلط قرار دے دیا

شریف خاندان کیخلاف ثبوت موجود ہیں، مالک
Jan 10, 2021

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/KEVEY-MASVI-FS-10-01.mp4"][/video]

براڈ شیٹ کے مالک نے دعویٰ کیا ہے کہ ان کے پاس شریف خاندان کے اثاثوں کی معلومات موجود ہیں۔ پرویز مشرف نے معاہدہ ختم کرنے پر بے بسی کا اظہار کیا تھا۔

نیب نے مشرف دور میں بیرون ملک چھپائے گئے پاکستانیوں کے اثاثوں کا پتہ چلانے کے لیے لیگل فرم براڈ شیٹ ایل ایل سی کی خدمات حاصل کی تھیں۔ نیب نے براڈ شیٹ کے ساتھ معاہدہ 2003 میں ختم کردیا جس پر فرم نے ہرجانے کا دعویٰ دائر کیا تھا۔

پاکستان بین الاقوامی فورم پر قانونی جنگ ہار گیا اور بین الاقوامی ثالثی عدالت نے براڈ شیٹ کیس میں پاکستان کو 2 کروڑ 10 لاکھ ڈالر جرمانہ کردیا جو پاکستان نے گزشتہ ہفتے ادا کردیا ہے۔

نیب کا دعویٰ ہے کہ براڈ شیٹ نے کوئی ثبوت نہیں ڈھونڈے جس کی بنا پر معاہدہ منسوخ کیا مگر براڈ شیٹ کے مالک کیوے ماسوی نے یہ دعویٰ مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے پاس شریف خاندان کی سیکڑوں ملین ڈالرز کے اثاثوں کی معلومات اور ثبوت ہیں لیکن شریف خاندان کے پاس ان اثاثوں کی وضاحت نہیں۔

کیوے ماسوی کے مطابق انہوں نے پرویزمشرف سے کہا تھا آپ جائیدادوں کا سراغ سے پیچھے کیوں ہٹ گئے جس پر انہوں نے بے بسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھا کہ الیکشن میں وہی لوگ منتخب ہوگئے ہیں۔ وزیراعظم عمران خان کہیں تو ایون فیلڈ اپارٹمنٹس کی تحقیقات کریں گے۔

مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب نے ان کو گھسی پٹی باتیں قرار دیتے ہوئے کہا کہ  قانون بھی ان باتوں کو رد کر چکا ہے۔ سپریم کورٹ میں نواز شریف کیخلاف ثبوتوں کے صندوق آئے تھے لیکن انہیں اقامہ پر نااہل کیا گیا۔

BROADSHEET

Tabool ads will show in this div