کیپیٹل ہل: ٹرمپ کے حامیوں کی ہنگامہ آرائی، 4افراد ہلاک

واقعہ الیکٹورل ووٹوں کی گنتی کے دوران پیش آیا
Jan 07, 2021
Congress Holds Joint Session To Ratify 2020 Presidential Election [video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/MA-US-INCIDENT-PKG-06-01-Shahbaz.mp4"][/video]

امریکی کانگریس میں الیکٹورل ووٹوں کی گنتی کے موقع پر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامیوں کی جانب سے ہنگامہ آرائی کے بعد واشنگٹن میں کرفیو نافذ کر دیا گیا جبکہ پولیس سے جھڑپ کے دوران خاتون سمیت 4 افراد ہلاک ہوگئے۔

مظاہرین رکاوٹیں ہٹا کر کیپیٹل ہل میں داخل ہوئے اور کھڑکیوں کے شیشے توڑ ڈالے۔ ارکان کانگریس کے دفاتر اور اسپیکر کی کرسی پر قبضہ جما لیا جبکہ اس دوران پولیس کے ساتھ جھڑپیں بھی ہوئیں۔

واشنگٹن پولیس کے مطابق مظاہرین میں شامل ایک خاتون پولیس کی فائرنگ سے ہلاک ہوگئی جبکہ مزید 3 افراد طبی وجوہات کی بنا پر ہلاک ہوگئے۔ پر تشدد مظاہروں اور کرفیو کی خلاف ورزی پر اب تک 52 افراد کو گرفتار کیا جا چکا ہے جبکہ مسلح افراد کے ساتھ جھڑپوں میں 14 پولیس اہلکار زخمی ہوئے۔

اليکٹورل کالج نے جو بائيڈن کی فتح کی تصديق کردی

 کانگریس کے مشترکہ اجلاس کو روک کر امریکی نائب صدر مائیک پینس اور دیگر ارکان کو محفوظ مقام پر منتقل ہونا پڑا جبکہ ٹرمپ کی اپیل کے بعد مظاہرین کیپیٹل ہل سے منتشر ہوگئے۔

پر تشدد مظاہروں کے بعد وائٹ ہاؤس کی سوشل سیکریٹری اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئیں۔

سنگین صورتحال کے پیش نظر فوج کو طلب کرکے واشنگٹن کے میئر نے ایک دن کے لیے کرفیو نافذ کر دیا ہے۔ کيپيٹل ہل کی عمارت کو لاک ڈاؤن کر ديا گيا جبکہ کرفيو کا نفاذ مقامی وقت کے مطابق شام 6 بجے ہوگا۔

صورتحال کشیدہ ہونے پر ٹویٹر نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا حالیہ ٹويٹ ڈيلیٹ کرکے ان کا اکاؤنٹ 12 گھنٹے کے لیے بند کر دیا۔ ٹویٹر انتظامیہ کے مطابق ٹرمپ کے 3 ٹویٹ ڈیلیٹ کیے گئے ہیں۔

ٹرمپ نے اپنی ٹویٹ میں کہا تھا کہ انتخابات میں عوام کو دور رکھنے سے ایسے واقعات ہوتے ہیں۔ امریکی عوام آج کے دن کو ہمیشہ یاد رکھیں گے جبکہ انہوں نے اپنے ٹویٹ میں ووٹرز کی حق تلفی کا دعویٰ بھی کیا تھا۔

دوسری جانب ٹویٹر کے بعد فیس بک انتظامیہ نے بھی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا اکاؤنٹ بلاک کر دیا۔

واقع پر نو منتخب امریکی صدر جوبائیڈن کا کہنا تھا کہ آج امریکی تاریخ کا سیاہ ترین دن ہے۔ صدارتی فرمان کو اہمیت دینی چاہیے لیکن مظاہروں میں ووٹ کا تقدس پامال کیا گیا۔ مظاہروں کا ڈرامہ امریکی عوام کی حقیقی نمائندگی نہیں۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ مقاصد کے حصول کے لیے پُرامن احتجاج کے ہر شہری کے بنیادی حق پر یقین رکھتا ہوں لیکن کیپٹل ہل عمارت میں مظاہرین کا داخل ہونا ناقابل قبول ہے۔ واقعے کے مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لانا ہوگا۔

US CONGRESS

Tabool ads will show in this div