سنیئر صحافی عبدالحمید چھاپرا انتقال کرگئے

کراچی پریس کلب کا اظہار افسوس
Photo: Journalism Pakistan
Photo: Journalism Pakistan

معروف صحافی رہنما اور کراچی پریس کلب کے سابق صدر عبدالحمید چھاپرا منگل کو انتقال کرگئے۔ کراچی پریس کلب کے عہدیداروں نے ان کے انتقال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اسے صحافیوں کا عظیم نقصان قرار دیا ہے۔

اہل خانہ کے مطابق ان کی نماز جنازہ بدھ کی رات جامع مسجد بلال بلاک نمبر 4 جرنلسٹس سوسائٹی ابوالحسن اصفہانی روڈگلشن اقبال میں اداکی جائی گی اور بعد ازاں صفورا گوٹھ قبرستان میں سپرد خاک کیا جائے گا۔

عبدالحمید چھاپرا کراچی پریس کلب کے 5 مرتبہ صدر رہے۔ اس کے علاوہ کراچی یونین آف جرنلسٹس اورفیڈرل یونین آف جرنلسٹس کے بھی صدر رہے۔ عبدالحمید چھاپرا تین کتابوں کے بھی مصنف تھے۔ انہیں اردو،انگریزی اور گجراتی زبانوں پر عبور حاصل تھا۔

انہوں نے 1977 کے انتخابات میں پاکستان قومی اتحاد کے پلیٹ فارم سے کراچی کے قدیمی علاقے برنس روڈ سے سندھ اسمبلی کی نشست کے لیے انتخاب میں بھی حصہ لیا۔ وہ تحریک استقلال سے بھی وابستہ رہے۔

عبدالحمید چھاپرا نے بڑے سیاسی رہنماؤں کے ہمراہ قیدوبند صعوبتیں بھی برداشت کیں۔ انہوں نے آزادی صحافت میں اہم کردار اداکیا جبکہ وہ انسانی حقوق کے حوالے سے بھی متحرک رہے۔

Photo: Journalism Pakistan

وہ پیشہ ورانہ لحاظ سے سینئر کامرس رپورٹر اور تجزیہ کار تھے اور کئی اخبارات سے وابستہ رہے۔ جب تک ان کی طبیعت بہتر رہی اور روزانہ کراچی پریس کلب آتے اور صحافیوں کے ساتھ ملاقاتوں کے علاوہ مباحثوں میں شریک ہوتے رہے۔

کراچی پریس کلب کے صدر امتیازخان فاران، سیکرٹری جنرل ارمان صابر اور دیگر عہدیداروں نے عبدالحمید چھاپرا کے انتقال پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے اور ان کے انتقال کو کراچی سمیت ملک بھر کی صحافی برادری کے لیے ایک عظیم نقصان قرار دیا ہے۔

انہوں نے اپنے تعزیتی بیان میں کہا کہ آج ہم پاکستان میں صحافتی حقوق کے علمبردار ایک عظیم رہنما سے محروم ہوگئے ہیں۔ کراچی پریس کلب کے عہدیداروں نے مرحوم کے لواحقین سے دلی ہمدردی کا اظہار کرتے ہوئے ان کی مغفرت کے لئے دعا بھی کی ہے۔

JOURNALIST

Abdul Hameed Chhapra

Tabool ads will show in this div