پاکستان میں مینگرووزکےجنگلات بڑھنے سےسمندری حدود میں اضافہ

اربوں روپے آمدن متوقع
Dec 19, 2020
[caption id="attachment_1744532" align="alignnone" width="680"] فوٹو: سندھ فوریسٹ[/caption]

مشیر ماحولیات ملک امین اسلم نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان میں مینگرووز کےجنگلات بڑھنےسےسمندری حدود میں اضافہ ہوا ہے۔

ملک امین اسلم نے بتایا ہے کہ جنگلات میں کاربن کی شرح ناپنے کیلئے تحقیق شروع کرا دی ہے۔ یہ ریسرچ پاکستان اورورلڈبینک کے اشتراک سے شروع کی کئی ہے اور3 ماہ میں مکمل ہوگی جس سے اربوں روپے آمدن متوقع ہے۔

ٹویٹ میں انھوں نےمزید بتایا کہ وفاقی حکومت سندھ ،بلوچستان کے ساحلوں پر مزید ایک ارب مینگرووز لگانےجارہی ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان مینگروو کے جنگلات بڑھانے والا دنیا کا پہلا ملک بن گیا ہے۔ڈبلیو ڈبلیو ایف اورانسٹی ٹیوٹ آف اسپیس ٹیکنالوجی کی مشترکہ ریسرچ رپورٹ کے لیے اسلام آباد اسپیس انسٹیٹیٹوٹ اور ڈبلیو ڈبلیو ایف کی مشترکہ کاوش میں سندھ اور بلوچستان کے کوسٹل بیلٹس کے 5 حصوں پر گوگل ارتھ اور رئیل فارسٹ کلاسیفائر کو استعمال کرتے ہوئے سائنٹیفک ریسرچ کی گئی ہے۔اس کےتمام سائنسدان پاکستانی ہیں جنہوں نے یہ ریسرچ کی۔

ریسرچ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سالانہ 3.74 فیصد کی شرح سے جنگلات میں اضافہ ہوا ہے۔گزشتہ 30 سال میں منگروو کے جنگلات میں 986 کلومیٹراضافہ ہوا۔ 30 سال قبل یہ 500 کلو میٹر کے رقبے پر تھے۔

اس سےقبل2009 میں پاکستان 1 دن میں سب سے زیادہ مینگروو لگانے کا ورلڈ ریکارڈ بھی بنا چکا ہے۔

Tabool ads will show in this div