نائجیریا، اسکول کے300سےزائد طلبہ لاپتہ

اسکول میں 600 سے زائد طلبہ زیر تعلیم تھے
فوٹو: ٹوئٹڑ
فوٹو: ٹوئٹڑ
[caption id="attachment_2128869" align="alignnone" width="800"] فوٹو: ٹوئٹڑ[/caption]

نائجیریا کی شمال مغربی ریاست کٹسینا کے ایک اسکول پر مسلح افراد کے حملے کے بعد 300سے زائد طلبہ لاپتہ ہیں۔

کٹسینا پولیس کے ترجمان گیمبو عیسیٰ نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ڈاکوؤں کے ایک گروہ نے کنکارہ میں گورنمنٹ سائنس سیکنڈری اسکول پر حملہ کیا۔ ترجمان پولیس کا کہنا ہے کہ 200طلبہ کا پتہ لگا لیا گیا ہے تاہم مزید 300سو کے قریب طلبہ لاپتہ اب بھی ہیں۔ معلومات کے مطابق اسکول میں 600 سے زائد طلبہ زیر تعلیم تھے۔

گیمبو عیسیٰ نے مزید کہا کہ نائجیریئن فوج اور ایئر فورس اسکول حکام کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں تاکہ یہ تعین کیا جا سکے کہ کتنے طلبہ لاپتہ یا اغوا ہوگئے ہیں۔

انھوں نے مزید کہا کہ ریسکیو حکام گمشدہ طلبہ کو ڈھونڈنے کی کوششوں میں مصروف ہیں۔

اس سے قبل بھی اپریل 2014 حملہ ہوا تھا جس میں شدت پسند گروہ بوکوحرام نے شمال مشرقی ریاست بورنو کے علاقے چیبوک میں ایک سکول کے ہوسٹل سے 276 طالبات کو اغوا کرلیا تھا۔ ان میں سے 100طالبات اب بھی لاپتہ ہیں۔

دوسری جانب بوکوحرام نے ایک آڈیو پیغام میں واقعے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔

Tabool ads will show in this div