انسدادِ ریپ آرڈیننس2020ء منظور

ملک بھر میں خصوصی عدالتیں قائم ہونگی
Dec 15, 2020

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے انسدادِ ریپ آرڈیننس2020 ء کی منظوری دیدی۔

آرڈیننس کے بعد عورتوں اور بچوں کیخلاف ریپ کے معاملات کو جلد نمٹانے میں مدد ملے گی جبکہ تیز ٹرائل کیلئے ملک بھر میں خصوصی عدالتیں بھی قائم کی جائیں گی۔

آرڈیننس2020 کے تحت خصوصی عدالتیں 4ماہ کے اندر جنسی زیادتی کے کیسز کو نمٹائیں گی، کرائسس سیل 6گھنٹے کے اندر اندر میڈیکو لیگل معائنہ کرانے کا مجاز ہوگا۔

نادرا کی مدد سے قومی سطح پر جنسی زیادتی کے مجرمان کا رجسٹر تیار کیا جائے گا۔

آرڈیننس کے مطابق ریپ کے متاثرین کی شناخت ظاہر کرنے پر پابندی ہوگی جبکہ ایسا نہ کرنا قابلِ سزا جرم ہوگا۔

ARIF ALVI

Tabool ads will show in this div