کشمورمیں ریپ کانشانہ بننے والی بچی کی حالت بہترہونے لگی

کھانا پینا شروع کردیا
CHILD-RAPE-6

کشمور میں ریپ کا نشانہ بننے والی 4 بچی کی حالت بہتر ہونے لگی ہے۔ کراچی کے قومی ادارہ برائے امراض اطفال میں زیر علاج بچی نے کھانا پینا بھی شروع کردیا۔

قومی ادارہ برائے امراض اطفال (این آئی سی ایچ) کے ڈاکٹر جمال رضا نے کہا ہے کہ بچی کی حالت بہتر ہونے لگی ہے۔ اس نے کھانا پینا شروع کردیا ہے جس کے بعد سینے کی ٹیوب اور پیٹ کی نالی نکال دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ بچی کو سانس اور پیٹ کی تکلیف نہیں ہے۔ زخم اب بہتری کی طرف جا رہے ہیں۔ بچی ایک دو روز میں چلنا شروع کردے گی مگر زیادہ لوگوں کو دیکھ کر بچی گھبرا رہی ہے۔

یاد رہے کہ 4 سالہ بچی کو اس کی والدہ کے ہمراہ نوکری کا جھانسہ دے کر کشمور لے جایا گیا جہاں ماں بیٹی کو تین ملزمان نے گینگ ریپ کا نشانہ بنایا۔ کشمور پولیس نے ماں بیٹی کو بازیاب کرکے ملزمان کو گرفتار کرلیا تھا جن میں ایک ملزم پولیس مقابلے میں مارا گیا ہے۔

Tabool ads will show in this div