کم سن کلی ارفع کےکیس میں سنسنی خیزموڑ،تایازادبھائی زیرحراست

GIRL MURDER FOLLOWUP UPDT LHR PKG USMAN 02-11 لاہور : لاہور ميں چار سالہ بچي کے اغواٰٗ کے بعد قتل کا معاملہ مزید پیچیدہ ہوگیا، پوليس نے بچي  کے سگے تايا زاد بھائيوں کو حراست ميں لے ليا۔ خاتون سمیت زير حراست ملزمان کي تعداد پانچ ہوگئي۔ گزشتہ روز گجر پورہ ميں اغواٗ کے بعد قتل ہونے والي تين سالہ ارفع کے سگے تايا زاد بھائيوں کو پوليس نے حراست ميں لے ليا ہے۔ پوليس کے مطابق گزشتہ روز بھي شہبے ميں خاتون سميت تين افراد کو حراست ميں ليا گيا تھا، زير حراست ملزمان کي تعداد پانچ ہوگئي ہے۔ تمام ملزمان سے پوچھ گچھ جاري ہے،لیکن تاحال حتمي ملزم کا تعين نہيں کيا جاسکا۔ پوليس کا کہنا ہے کہ پوسٹ مارٹم اور فرانزک رپورٹس آنے پر تفتيش کا عمل تکميل تک پہنچے گا۔ دوسری جانب ابتدائي تحقيقاتي رپورٹ کے مطابق ننھی کلی کو ارفع کو اغوا کے بعد گلا دبا کر قتل کيا گيا۔ واضح رہے کہ گجرپورہ کي رہائشي ارفع رات کے وقت گھر سے غائب ہوگئی جب اس کے والدین سامنے والے مکان میں مذہبی اجتماع میں شریک تھے، بچی کی لاش دوسرے روز ہمسائے کے گھر کي چھت سے ملي۔ ابتدائی تفتیش کے مطابق ننھی ارفع کے بائيں بازو پر انگليوں کے نشانات ملے ہيں، بچي کے گھر کي چھت پر ديوار کے ساتھ ايک کرسي بھي پڑي ہے، جس سے شہبہ ظاہر کيا ہے کہ ارفع کي لاش اس کے گھر کي چھت سے ہی ہمسائے کي چھت پر گرائي گئي۔ ابتدائي پوسٹ مارٹم رپورٹ ميں بچي سے زيادتي ثابت نہيں ہوئي اور اس کي ہلاکت گلا دبانے سے ہوئي، قتل کی وجہ کیا تھی ؟ یہ بات ابھی تک سامنے نہیں آسکی۔ سماء

PUNJAB

PARENTS

DEAD BODY

CHILD

LAID TO REST

MINOR GIRL

ABUSE

ROOF TOP

NEIGHBOUR

PUNJAB CASE

no rape

arfa

gujarpura

پاکستان abducted

FUNRAL

Tabool ads will show in this div