کٹھ پتلیوں کےپاس اقتدارتوہے لیکن عوام نہیں،بلاول

آپ کے حقوق کی حفاظت کرینگے،استور میں خطاب

پی پی چیئرمین بلاول بھٹو کا کہنا ہے کہ کٹھ پتلیوں کے پاس اقتدار ہے لیکن عوام نہیں۔ سلیکٹڈ کو گلگت کے عوام کا کچھ نہیں پتا۔ وفاقی وزیر 2 سال بعد دورے پر آتے ہیں مگر صرف ووٹ لینے کیلئے عوام کیلئے نہیں آتے۔

استور کے علاقے پکوار میں جلسہ عام سے خطاب میں پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ ہم گلگت بلتستان کے نوجوانوں کو روزگار دیں گے۔ یہاں کے عوام کو حق حاکمیت اور حق ملکیت دلواؤں گا۔ گلگت بلتستان کے عوام کيلئے تین نعرے اور وعدے ہیں اور یہ نعرہ نہیں ہمارا منشور ہے۔

حکومت کو مخاطب کرتے ہوئے بلاول کا کہنا تھا کہ ان سے پوچھیں عوام کی تنخواہوں میں کتنا اضافہ کیا؟، 2سال ميں انہوں نے ایک ٹکا بھی اضافہ نہیں کیا۔ زرداری نے سال 2009 میں عبوری صوبہ بنا دیا تھا۔ یہ عبوری صوبہ بنانے کے بارے میں سوچ رہے ہیں۔ مگر ان کا حال یہ ہے کہ سلیکٹڈ کو گلگت کے عوام کا کچھ نہیں پتا۔ کٹھ پتلیوں کے پاس اقتدار تو ہے مگر عوام ان کے ساتھ نہیں۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کو کيا پتا گلگت کے کيا مسائل ہيں؟ ملک ميں نرسز، ڈاکٹر سے لے کر کسان تک احتجاج پر ہيں، مگر مجھے آپ لوگوں پر یقین ہے کہ آپ ہمارا ساتھ نہیں چھوڑیں گے۔ 15 نومبر کو ہر پولنگ اسٹيشن سے تير نکلے گا۔ عوام نے آج جلسے کے ذريعے فيصلہ سنا ديا۔

BILAWAL

SKARDU

Tabool ads will show in this div