لاہور:پولیس اہلکاروں کا ڈاکٹر پر تشدد،مقدمہ درج

شادمان ٹاؤن تھانے میں مقدمہ درج

لاہور ميں فارن آفس کے باہر شہری کو تشدد کا نشانہ بنانے والے 2 پوليس اہلکاروں کے خلاف مقدمہ درج کرکے ایک اہل کار کو گرفتار کرلیا۔

لاہور میں 25 ستمبر جمعہ کو فارن آفس کے باہر تلخ کلامی پر پوليس اہلکاروں نے شہری کو تشدد کا نشانہ بنايا تھا۔ ڈاکٹر نعمان پر تشدد کی فوٹيج سوشل ميڈيا پر وائرل ہونے کے بعد سی سی پی او لاہور نے واقعہ کا نوٹس ليا تھا۔

واقعہ سامنے آنے پر سی سی پی او کے حکم پر ایس پی سیکیورٹی اور ایس پی ہیڈ کوارٹرز نے انکوائری کے بعد ہیڈ کانسٹیبل گلفام اور کانسٹیبل اسلام کو واقعہ میں قصور وار قرار ديا ہے۔

حکام کے مطابق دونوں اہل کاروں نے اختيارات سے تجاوز اور شہری کی عزت نفس کو مجروح کیا۔ دونوں اہلکاروں کے خلاف تھانہ شادمان ميں مقدمہ درج کر ليا گيا ہے۔ ہيڈ کانسٹيبل گلفام کو گرفتار کر ليا گيا، جب کہ دوسرا کانسٹيبل فرار ہوگيا۔

ڈاکٹر نعمان دستاویزات کی تصدیق کیلئے لاہور فارن منسٹری کیمپ آفس پہنچے تھے تو ڈیوٹی پر موجود اہلکار نے ان سے بدتمیزی کی تھی۔

فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ پولیس اہلکار ڈاکٹر نعمان کو گریبان سے پکڑ کر تشدد کرتا رہا، جب کہ دوسرا فوٹیج بنانے والے شہری کو روکتا رہا۔

CCPO

PUNJAB POLICE

Tabool ads will show in this div