عجب کرپشن: 30 ہزار ٹرکوں کو موٹرسائیکل کے نمبر جاری

اینٹی کرپشن حکام سرگرم
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/09/Anti-Corruption-Action-Lhr-Pkg-24-09.mp4"][/video]

پنجاب کے محکمہ اينٹی کرپشن نے گاڑیوں کی جعلی رجسٹریشن کی مد میں اربوں روپے کے فراڈ کا سراغ لگا لیا۔ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے افسران پرائیویٹ ایجنٹس سے مل کر جعل سازی کرتے رہے۔ تین افسروں کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

حکومت پنجاب کے محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے تین افسران نے ایجنٹ مافیا کی ملی بھگت سے بوگس ووچرز پر گاڑیاں رجسٹر کیں اور یہاں تک موٹرسائیکل کے نمبروں پر ٹرک چلوا دیے۔

ترجمان اینٹی کرپشن کے مطابق ایکسائز افسران پرائیویٹ ایجنٹوں کو جعلی ووچرز پر گاڑیوں کی رجسٹریشن بکس جاری کرتے رہے اور ایجنٹس نے چیسز نمبر پنچ کرا کے بسیں اور لوڈر گاڑیاں تیار کرائیں۔

اینٹی کرپشن نے 465 گاڑیوں کی نشاندہی کردی اور ساتھ 30 ہزار کے لگ بھگ لوڈر گاڑیوں کا مارکیٹ میں موجود ہونے کا دعوی بھی کردیا۔

ترجمان اینٹی کرپشن وقارعظیم کا کہنا ہے کہ تینوں افسران نے ایجنٹس کے ساتھ مل کر اپنے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا اور انہیں فائدہ پہنچایا۔

اینٹی کرپشن حکام کے مطابق موٹرسائیکلوں کے نمبر پر کمپیوٹرائزڈ ریکارڈ میں لوڈر ٹرک چل رہے ہیں۔ مقدمے میں نامزد ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کے تین افسروں کو جلد گرفتار کرلیا جائے گا۔

PUNJAB

Curroption

Tabool ads will show in this div