کلبھوشن کےوکیل کیلئےبھارت سےدوبارہ رابطےکاحکم

بھارتی جواب کا 6اکتوبر تک انتظارکرلیاجائے،عدالت
KULBHUSHUN-YADAV-1 فائل فوٹو

اسلام آباد ہائی کورٹ نے بھارت کو کلبھوشن یادیو کے لئے وکیل مقرر کرنے کے لئے ایک اور پیشکش کرنے کا حکم دے دیا۔

جمعرات 3 ستمبر کو کلبھوشن یادیو کے لیے وکیل مقرر کرنے کی حکومتی درخواست پر سماعت ہوئی۔

عدالت نے اٹارنی جنرل سے استفسار کیا کہ بھارت کے جواب کے لیے کب تک وقت چاہیئے؟ جس پر اٹارنی جنرل نے عدالت کو بتایا کہ 4 ہفتوں تک کا وقت دے دیں کیونکہ ہم نے تیسری بار بھارت کو پیشکش کی تھی جواب نہیں آیا۔

اٹارنی جنرل نے بتایا کہ بیرسٹر شاہ نواز نون کو بھارت کی جانب سے جونیئر قونصل مقرر کیا گیا تھا اور جونیئر قونصل نے صرف دستاویزات حاصل کی تھیں۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ کلبھوشن نے تو خود اپیل کرنے سے انکار ہی کیا ہے نا؟ ہم سمجھتے ہیں کہ بھارت کو ایک اور پیشکش کی جائے۔ عدالت نے کہا کہ 6 اکتوبر تک بھارت کی جانب سے جواب کا انتظار کر لیں۔

عدالت نے 6 اکتوبر تک سماعت ملتوی کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر بھارتی جواب سے آگاہ کرنے کا حکم دے دیا۔

KULBHUSHAN JADHAV

Tabool ads will show in this div