صرف ہم قصوروار نہیں پورا سسٹم ہے، کے الیکٹرک

اوسط کے حساب سے ملنے والے بل ایڈجسٹ ہوجائیں گے

کراچی ميں لوڈ شيڈنگ اور اوور بلنگ سے متعلق کے الیکٹرک کے سی ای او کا کہنا ہے کہ مجھے افسوس ہے اور عوام سے شرمسار ہوں مگر صرف ہم قصوروار نہیں یہ پورا سسٹم ہے۔

کراچی میں پريس کانفرنس کرتے ہوئے سی ای او مونس علوی نے کہا کہ 7 سے 8 گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ تو ہوتی ہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ پہلے 16 سے 20 گھنٹے کا بل آتا تھا پھر لوڈ شیڈنگ بند ہوگئی تو 24 گھنٹے کا بل آنے لگا، جنہيں اوسط کے حساب سے بل ملے وہ ايڈجسٹ ہوجائيں گے۔

سی ای او کے اليکٹرک کا کہنا تھا کہ ايک ہی وقت ميں 15 سے 20 فیڈرز پر کچھ نہ کچھ کام ہو رہا ہوتا ہے۔ اس دوران بجلی کی بندش لوڈ شيڈنگ نہيں ہوتی۔

K ELECTRIC

Tabool ads will show in this div