تعمیراتی صنعت پورے ملک کو چلا سکتی ہے، وزیر اطلاعات

دس مرلہ کے گھر کیلئے 7فیصد شرح سود پرقرض ملےگا
Jul 12, 2020

وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز کا کہنا ہے کہ وزیر اعظم نے تعمیراتی صنعت کو اٹھانے کے لیے بڑا پراجیکٹ دیا ہے کیونکہ تعمیراتی صنعت پورے ملک کی معیشت کو چلا سکتی ہے۔

اسلام آؓباد میں چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اسکیم کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے کہا کہ حکومت کا کام گھر بنانا نہیں ہے بلکہ ہمارا کام وہ ماحول بنانا ہے جس سے گھروں کی تعمیر ہو سکے۔

شبلی فراز نے کہا کہ تمام انویسٹرز کو چاہیے کہ وہ اس انڈسٹری میں آ کر سرمایہ کاری کریں جبکہ اسٹیٹ بنک اور ایف بی آر سہولیات فراہم کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ اس صنعت سے 40 دیگر صنعتیں منسلک ہیں اور تعمیراتی شعبے سے روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوتے ہیں۔ ملک میں سستے مکانات کی تعمیر بڑا مسئلہ ہے اس لیے 10 مرلے تک کے گھروں کی تعمیرات کرنے والوں کو پیکج دیا گیا ہے۔

اس موقع پر چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی انور علی حیدر کا کہنا تھا کہ 5 مرلے کے گھر کے لئے 5 فیصد اور 10 مرلے کے گھر کے لئے 7 فیصد شرح سود پر قرضہ ملے گا۔

انہوں نے کہا کہ بلڈرز ڈویلپرز کو ٹیکس کے معاملات اور فنانسنگ کے مسائل تھے اور منصوبوں کی منظوری کا طریقہ کار بہت مشکل تھا۔ بلیک منی کو وائٹ کرنے کے لئے 31 دسمبر 2020 تک کی ڈیڈ لائن ہے جبکہ بلیک منی کو وائٹ کرنے کے لئے ٹیکس قوانین میں تبدیلی کی گئی ہے۔

چیئرمین نیا پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی کا کہنا تھا کہ ملکی سطح پر نیشنل کوارڈی نیشن کمیٹی فار ہاؤسنگ بنائی گئی ہے جبکہ تعمیراتی شعبے میں منظوری کا عمل پورٹل کے زریعے آسان بنایا جارہا ہے۔

SHIBLI FARAZ

CONSTRUCTION INDUSTRY

Tabool ads will show in this div