احتساب عدالت کاپارک لین کیس میں دائرہ کاربنتاہی نہیں،فاروق نائیک

قرض کےمعاملےپراسٹیٹ بینک نےپہلےبتاناہوتا ہےڈیفالٹ کون ہے

[video width="640" height="352" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/07/WhatsApp-Video-2020-07-06-at-11.54.14-AM.mp4"][/video]

فاروق نائیک نے کہا کہ احتساب عدالت کا پارک لین کیس میں دائرہ کار بنتا ہی نہیں ہے،آصف علی زرداری کا قرضہ لینے والی کمپنی سے کوئی تعلق ہی نہیں،90 کی دہائی سےسیاسی کیس بنائےجاتےرہےہیں اور اس باربھی بری ہوںگے۔

پیر کو احتساب عدالت میں آصف علی زرداری  نے وڈیو لنک کے ذریعے حاضری لگائی  جس کے بعد اپنے وکیل فاروق نائیک سے مخاطب ہوئے اور پوچھا کہ اب اس کے بعد کیا لائحہ عمل ہوگا؟ فاروق نائیک نے جواب دیا کہ ہم نے فرد جرم عائد کرنے سے روکنے کی درخواست دی ہے،اب پہلےوہ سنی جائے گی،پھرفردِجرم کا فیصلہ ہوگا۔آصف زردادی نے کہا کہ کیا فرد جرم کے بعد ٹرائل شروع ہو جائے گا؟ فاروق نائیک نے کہا جی ہاں،اس کے بعد ٹرائل شروع ہو جائے گا۔

سماعت کےبعد احتساب عدالت کے باہرمیڈیا سےبات کرتے ہوئےآصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے بتایا کہ آصف زرداری 2008 سےپارک لین کےڈائریکٹر نہیں رہے، قرض 2009 میں پارتھینون سےلیا گیا جس سےآصف زرداری کا تعلق نہیں،بینک نےکراچی میں کیس کی قرض ریکوری کی،اس میں زردادی فریق نہیں۔

پارک لین ریفرنس:آصف زرداری سمیت دیگر پرفردِجرم کی کارروائی موخر

فاروق نائیک نے کہا کہ احتساب عدالت کا اس کیس میں دائرہ کار بنتا ہی نہیں ہے،آصف علی زرداری کا قرضہ لینے والی کمپنی سے کوئی تعلق ہی نہیں،90 کی دہائی سےسیاسی کیس بنائےجاتےرہےہیں اور اس باربھی بری ہوںگے۔

فاروق نائیک نے مزید بتایا کہ آصف زرداری کوکئی بیماریاں ہیں جس کے باعث ڈاکٹرزنےاسپتال سےگھربھیجا تھا،اسپتال میں کرونا ہونےکا خطرہ تھا اس لئےگھرمیں زیرعلاج ہیں۔

فاروق نائیک نے یہ بھی بتایا کہ عدالت کو یہ بھی کہا ہے کہ یہ کیس چلانے کی اتنی جلدی کیا ہے اوربھی کیس پڑےہیں۔

واضح رہے کہ پارک لین ریفرنس کیس میں اسلام آباد کی احتساب عدالت نے سابق صدر آصف علی زرداری پر فرد جرم کی کارروائی موخر کردی، پارک لین ریفرنس پرسماعت 14جولائی تک ملتوی کردی گئی ۔

آصف زرداری کے وکیل فاروق ایچ نائیک نے عدالت کو کہا کہ اس مرحلےپرفردجرم عائد نہیں کی جاسکتی، قرض کےمعاملےپراسٹیٹ بینک نےپہلےبتاناہوتا ہے ڈیفالٹ کون ہے، مکمل تفصیلات فراہم کرناہوتی ہیں جوہمیں نہیں دی گئیں۔

عدالت نے ریمارکس دئیے کہ آج فرد جرم عائد نہیں کی جاسکےگی۔احتساب عدالت نے فردِجرم کےخلاف آصف زرداری کی درخواست پر نیب کو نوٹس جاری کردیا ہے۔آصف زرداری کی درخواست دیگرشریک ملزمان کوبھی فراہم کرنےکاحکم دیا گیا ہے۔ عدالت نے ریمارکس دئیے کہ آصف زرداری کی درخواست پر فیصلے کےبعدفردجرم عائدکی جائےگی۔

Park-lane Case

Tabool ads will show in this div