لاہور:یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسزنےپلازماتھراپی سے200مریضوں کاعلاج ممکن بناليا

عطیہ کرنے کی اپیل
Jun 10, 2020
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/06/Drs-Presser-Lhr-Pkg-10-06.mp4"][/video]

لاہور میں یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز نے کرونا وائرس کے خلاف پلازما تھراپی سے 200 مریضوں کا علاج ممکن بناليا ۔ ماہرين نے وائرس سے صحت یاب ہونے والے لوگوں سے پلازما عطیہ کرنے کی اپیل بھی کی ہے۔

بدھ کو يونيورسٹی آف ہيلتھ سائنسز میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ڈاکٹر جاوید اکرم نے بتایا کہ صرف 5 فیصد لوگ تشویشناک حالت تک پہنچتے ہیں جنہیں وینٹیلیٹر کی ضرورت پڑتی ہے۔ کرونا کی بڑھتی ہوئی شرح میں ٹہراؤ لانے کے لیے سخت کرفیو نافذ کرنے کی ضرورت ہے۔

احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل درآمد کرنے کی تلقین کے ساتھ ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ لوگوں کوبلاوجہ نجی لیبارٹریوں سے مہنگے ٹیسٹ کرانے کی ضرورت نہیں، اگر کسی میں علامات ہوں تو گھر پر ہی اپنے آپ کو قرنطینہ کرلینا بہتر ہے۔

ڈاکٹرز نے دل اور بلڈ پریشر کے مریضوں کو خصوصی احتیاط کرنے کی ہدایت بھی کی ہے۔

PLASMA THERAPY

Tabool ads will show in this div