انصاف نہ ديا توآئی سی سی کے پاس جاؤں گا،سلیم ملک

اب تک رابطہ نہيں کيا
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/05/Saleem-Malik-Sot-12-05.mp4"][/video]

سابق کپتان سليم ملک  نے کہا ہے کہ اگر پاکستان کرکٹ بورڈ نے انصاف نہيں ديا تو آئی سی سی کے پاس جاؤں گا، پی سی بی سے بہت مرتبہ رابطہ کیا مگر جواب نہیں ملا۔

سليم ملک کے موقف پر پي سي بي نے ردعمل ديتے ہوئے کہا ہے کہ انھوں نے اب تک رابطہ نہيں کيا۔ مزيد جانتے ہيں سما کے نمائندے علي ہاشمي سے

سابق کپتان سلیم ملک نے میچ فکسنگ کے معاملے پر اپنے حالیہ ویڈیو پیغام میں کہا ہے کہ پی سی بی نے انصاف نہ دیا تو آئی سی سی جانے کا راستہ کھلا ہے،اگر بورڈ انصاف نہیں دیتا تو میں سب کچھ سامنے لاؤں گا۔

سلیم ملک نے دعویٰ کیا کہ پی سی بی سے بہت مرتبہ رابطہ کیا مگر اب تک جواب نہیں آيا، لوگ سمجھتے ہیں کہ میں شاید سلیکٹر یا ٹیم کی کوچنگ کرنا چاہتا ہوں۔ انھوں نے واضح کیا کہ اکیڈمی ميں نوجوان کرکٹرز کی کوچنگ کرکے پاکستان کی خدمت کرنا چاہتا ہوں۔

سلیم ملک کے حالیہ بیان پر پاکستان کرکٹ بورڈ نے کہا ہے کہ سابق کپتان  نے اب تک رابطہ نہیں کیا،سلیم ملک کو آئی سی سی کے سوالات 2011 میں بھجوائے تھے،اگر سوالات نہیں ملے تو بتائيے تا کہ دوبارہ بھجوائے جاسکیں۔

واضح رہے کہ سابق چيف ايگزيکٹو پاکستان کرکٹ بورڈ عارف علی عباسی نے کہا تھا کہ آسٹريلوی کرکٹرز نے سابق کپتان سليم ملک پرجھوٹے الزامات لگا کر پاکستان کو بدنام کرنے کی کوشش کی تھی۔

عارف علی عباسی نےاپنی ویڈیو میں کہا کہ آسٹریلیوی کھلاڑی شین وارن ، مارک وا اورٹم مے نے سلیم ملک پرفکسنگ آفر کے الزامات لگائے،جس سیریزمیں فکسنگ کے الزامات لگائے گئے تھے اس کوختم ہوئے6ماہ ہوگئے تھے۔

عارف عباسی نے مزید بتایا کہ آسٹریلوی الزامات پرآئی سی سی نے پاکستان کو تحقیقات کرنے کا کہا تھا، اس وقت فخرالدین جی ابراہیم نے تحقیقات کے بعد آسٹریلوی کرکٹرز کو جھوٹا قرار دیا تھا۔

saleem malik

Tabool ads will show in this div