عمران خان نے چیئرمین نیب کے تقرر کیخلاف ترمیم شدہ درخواست دائرکردی

اسٹاف رپورٹ


اسلام آباد : تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے چیئرمین نیب کی تقرری کے خلاف ترمیم شدہ درخواست سپریم کورٹ میں دائر کردی، کہتے ہیں صرف بے داغ ماضی کے حامل، ریٹائرڈ افسر کو ہی چیئرمین نیب تعینات کیا جاسکتا ہے۔


عمران خان کی طرف سے ترمیم شدہ درخواست حامد خان ایڈووکیٹ نے سپریم کورٹ میں دائر کی، درخواست میں چیئرمین نیب قمر زمان کیخلاف سپریم کورٹ کے 22 نومبر کے فیصلے کا حوالہ بھی دیا گیا ہے جس میں قمر زمان چوہدری کیخلاف نیب آرڈیننس کے تحت کارروائی کا حکم دیا گیا ہے۔


درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ داغدار ماضی کے حامل شخص کو احتسابی ادارے کا سربراہ نہیں بنایا جاسکتا، نیب کے سربراہ کیلئے صرف ریٹائرڈ افسر کا تقرر کیا جاسکتا ہے۔


پی ٹی آئی کا مؤقف ہے کہ قمر زمان کا انتخاب اس وقت کیا گیا جب وہ حاضر سروس تھے، حاضر سروس افسر چیئرمین نیب کے عہدے کیلئے نااہل ہے اس کا نام زیر غور ہی نہیں لایا جاسکتا۔


درخواست میں مزید کہا گیا ہے کہ چیئرمین نیب کی تقرری کیلئے صدر نے وزیراعظم اور اپوزیشن لیڈر سے مشاورت کرنا ہوتی ہے جبکہ قمر زمان کی تقرری کے عمل سے صدر کو مکمل طور پر باہر رکھا گیا اور صرف ایک جماعت کے نمائندے سے مشاورت کی گئی۔ سماء

کے

نے

عمران

درخواست

خان

چیئرمین

کیخلاف

promise

Tabool ads will show in this div