کورونا کا خوف، سندھ بھر میں عوامی اجتماعات پر پابندی

جلسے، جلوس، مجالس، میلوں، عرس، کھیلوں کی تقریبات ممنوع
Mar 13, 2020

سندھ حکومت نے صوبہ بھر میں ہر قسم کے عوامی اجتماعات پر پابندی عائد کردی، جلسے، جلوس، کھیلوں کی تقریبات، مجالس، میلوں، عرس اورریلیوں  کی اجازت نہیں ہوگی، شادی ہالز، شاپنگ مالز اور دیگر عوامی مقامات پر احتجاج کا مشورہ دیا گیا ہے۔

کمشنر کراچی افتخار شالوانی کے مطابق سندھ حکومت نے عوامی اجتماعات سے متعلق ایڈوائزری جاری کردی، جس میں عوام کو مشورہ دیا گیا ہے کہ اجتماعات سے گریز کریں، شادی ہالز، شاپنگ مالز اور دیگر عوامی مقامات پر احتیاط کا بھ مشورہ دیا گیا ہے، لوگ ایک ہی جگہ پر جمع ہونے سے گریز کریں۔

یہ بھی پڑھیں : یوم پاکستان کی پریڈمنسوخ، مدارس سمیت تعلیمی ادارے بندرکھنے کافیصلہ 

سندھ حکومت نے عوامی اجتماعات پر پابندی لگاتے ہوئے تمام ڈپٹی کمشنرز کو احکامات جاری کئے ہیں کہ جلسے، جلوس، کھیلوں کی سرگرمیوں، میلوں، عرس، ریلیوں اور مجالس کے انعقاد کی اجازت نہ دی جائے۔

اس سے قبل سندھ حکومت صوبہ بھر میں 30 مئی تک نجی و سرکاری اسکولوں، کالجز سمیت دیگر تعلیمی اداروں میں تعطیلات کا اعلان کیا جاچکا ہے، جبکہ خیبرپختونخوا اور بلوچستان حکومتوں نے بھی چھٹیوں کا فیصلہ کیا ہے۔

مزید جانیے :کراچی ایئرپورٹ پر آئسولیشن وارڈ قائم 

پاکستان میں کورونا سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 21 ہے، جن میں زیادہ تر کا تعلق کراچی سے ہے، تاحال 2 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں۔

دنیا بھر میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک لاکھ 36 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ مہلک مرض سے 5 ہزار سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

Tabool ads will show in this div