کراچی: کورونا کے متاثرہ مریض کے اہلخانہ کلیئر،آئسولیشن سے فارغ

ایران میں موجود پاکستانیوں کو وہیں روکا جائیگا، وزیراعلیٰ سندھ
فوٹو: آن لائن
فوٹو: آن لائن
فوٹو: آن لائن

محکمہ صحت سندھ نے تصدیق کی ہے کہ کورونا وائرس سے متاثرہ پہلے مریض کے اہلخانہ کو ٹیسٹ منفی آنے کے بعد آئسولیشن سے فارغ کردیا گیا، نوجوان تاحال قرنطینہ میں ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا ہے کہ عوام پریشان نہ ہوں حکومت بھرپور اقدامات کررہی ہے، جو لوگ ایران گئے ہیں اور ابھی واپس نہیں آئے انہیں وہیں روکا جائے گا۔

محکمہ صحت سندھ کے مطابق ایران سے آنیوالے کورونا وائرس کے متاثرہ مریض کے اہل خانہ کے ٹیسٹ کے نتائج منفی آئے ہیں، جس کے بعد انہیں کلیئر قرار دیتے ہوئے آئسولیشن وارڈ سے گھر بھیج دیا گیا ہے۔

محکمہ صحت نے بتایا ہے کہ کورونا وائرس سے متاثرہ مریض کو تاحال قرنطینہ میں رکھا گیا ہے، فی الحال اسے گھر بھیجنے کا کوئی فیصلہ نہیں ہوا۔

مزید جانیے : کرونا کے 80فیصد متاثرین معمولی کھانسی بخارکےبعد ٹھیک ہوجاتے ہیں

دوسری جانب وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت کورونا وائرس سے متعلق اجلاس ہوا جس میں چیف سیکریٹری، وزیر صحت، وزیراعلیٰ سندھ کے مشیر مرتضیٰ وہاب، میئر کراچی وسیم اختر، وزیراعلیٰ سندھ کے پرنسپل سیکریٹری، سیکریٹری صحت،  کمشنر کراچی اور دیگر متعلقہ افسران شریک ہوئے۔

اجلاس کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ ایران سے آنیوالے 1500 افراد کی فہرست ڈسٹرکٹ کمشنرز سے شیئر کی گئی ہے، تمام ڈسٹرکٹ ریپڈ رسپانس ٹیموں کو بھی ایران سے واپس آنیوالے افراد کی فہرست مہیا کی گئی ہے، ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کی جانب سے ملنے والا انفیکشن پریوینشن میٹیریل لاڑکانہ سے منگوا کر مختلف اسپتالوں میں تقسیم  کیا جارہا ہے، 52 ہزار ماسک اور 15 ہزار دستانے سندھ  کے اسپتالوں میں موجود ہیں۔

حکام کا مزید کہنا تھا کہ ڈاکٹر فیصل نے بتایا ہے کہ ماسک پہننا ضروری نہیں، وہ لوگ ماسک استعمال کریں جو متاثر لوگوں کے قریب ہوں، محکمیہ صحت نے تمام ہیلتھ، پبلک اینڈ پرائیویٹ مقامات پر سینی ٹائزر لگانے کی ایڈوائزری جاری کردی ہے۔

ویڈیو: کورونا وائرس، مراد علی شاہ کی پریشانی عیاں

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے اس موقع پر کہا کہ عوام پریشان نہ ہوں حکومت بھرپور اقدامات کررہی ہے، عوام اطمینان رکھیں حکومت آپ کی حفاظت کیلئے دن رات کام کررہی ہے، جو لوگ ڈی آر آر ٹیم کو فون کرکے بتائیں گے کہ کون بخار اور کھانسی میں مبتلا ہے اس کو گھر میں رہنے کی ہدایت کی جائے گی۔

انہوں نے بتایا کہ ایک ٹیم بھی بیمار شخص کے گھر بھیجیں گے اور مریض کے سیمپل کورونا ٹیسٹ کیلئے حاصل کرینگے، اگر مرض کی تشخیص ہوجاتی ہے تو اسے آئسولیشن وارڈ میں منتقل کیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں : کوروناوائرس: کراچی کے 6اسپتالوں میں آئسوليشن وارڈز قائم

وزیراعلیٰ سندھ کو بتایا گیا کہ لوگ کنٹرول روم میں فون کرکے ماسک مانگ رہے ہیں، مراد علی شاہ نے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ بلا ضرورت ہیلپ لائن پر کال نہ کریں، کنٹرول روم کورونا وائرس کے متاثرین کیلئے ہے تاکہ اُن کی مدد کی جائے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے مزید کہا کہ زیارتوں پر ایران جانیوالے پاکستانیوں کو واپس آنے سے روکا جائے گا۔

Tabool ads will show in this div