بچوں پر تشدد، گلوکار شہزاد رائےنےعدالت سے رجوع کرلیا

بچوں کی جسمانی سزا پرپابندی عائد کی جائے، درخواست
Feb 12, 2020

پاکستان کے معروف گلوکار شہزاد رائے نے بچوں پر تشدد اور جسمانی سزا پر پابندی کے لیے عدالت سے رجوع کرلیا۔

اسلام آباد ہائیکورٹ میں دائردرخواست میں موقف اختیارکیا گیا کہ تعلیمی اداروں میں بچوں کو سزا دینا معمول بن چکا ہے، تشدد اور سزا کی خبریں آئے روز میڈیا میں آ رہی ہیں جبکہ پڑھائی میں بہتری کیلئے بچوں کی سزا کو ضروری تصور کیا جاتا ہے۔

درخواست میں کہا گیا کہ بچوں کےحقوق کےحوالے سے پاکستان 182 ممالک میں سے 154 پوزیشن پر ہے، سپارک رپورٹ کے مطابق سالانہ 35000 بچے سزا کی وجہ سے اسکول چھوڑ رہے ہیں۔

درخواست میں استدعا کی گئی کہ اسکولز، جیل اوربحالی مراکز میں بچوں کی جسمانی سزا پرپابندی عائد کی جائے اور جسمانی وذہنی تشدد سے محفوظ رکھنے کیلئے حکومت کو اقدامات کی ہدایت کی جائےاور تحفظ یقینی بنانے کیلئے فوری حکم امتناع جاری کیا جائے۔

شہزاد رائے کی جانب سے دائردرخواست میں وزارت داخلہ، قانون، تعلیم اور انسانی حقوق کے سیکرٹریز سمیت آئی جی پولیس اسلام آباد کو فریق بنایا گیا ہے۔

corporal punishment

Shehzad Roy

Tabool ads will show in this div