مولانا محمد علی جوہر کی نواسی کراچی میں انتقال کرگئیں

ایصال ثواب کیلئے دعا کل ہوگی
Feb 08, 2020
[caption id="attachment_1838597" align="aligncenter" width="800"] Aziz Fatima in Gandhi's lap in 1931. This photo was reproduced in Newsline magazine in 2017.[/caption]

برصغیر پاک و ہند کے مسلمانوں کے عظیم رہنما مولانا محمد علی جوہر کی نواسی عزیز فاطمہ 89 برس کی عمر میں کراچی میں انتقال کرگئیں۔ ان کے شوہر معروف آرتھوپیڈک سرجن ڈاکٹر زین العابدین 2013 میں وفات پاچکے ہیں۔

مرحومہ کے ایصال ثواب کیلئے کل بروز اتوار بعد از نماز عصر ان کے گھر پر دعا کا اہتمام ہوگا۔ انہوں نے پسماندگان میں 3 بیٹیوں اور ایک بیٹے کو چھوڑا ہے۔

عزیز فاطمہ کی زندگی پر بہت لکھا جاچکا ہے مگر 2017 میں نیوز لائن میگزین نے ان پر خصوصی رپورٹ شائع کی جس میں ہر پہلو کا احاطہ کیا گیا۔

عزیز فاطمہ 23 فروری 1931 کو بھوپال میں پیدا ہوئیں۔ نیوز لائن کی رپورٹ میں انہوں نے اپنے خاندان کی پوری تاریخ پر روشنی ڈالی اور اپنے دادا مولانا محمد علی جوہر کی کہانیاں بھی سنائیں۔

[caption id="attachment_1838602" align="aligncenter" width="640"] Aziz Fatima at her home. This photo appeared in the 2017 Newsline story by Deneb Sumbu.[/caption]

مولانا محمد علی جوہر تقسیم برصغیر سے قبل برطانوی راج سے آزادی اور خلافت تحریک کے سرکردہ رہنماؤں میں شامل تھے۔

نیو یارک ٹائمز نے 1931 کو صفحہ اول پر ایک تصویر شائع کی جس میں مہاتما گاندھی نے 6 ماہ کی عزیز فاطمہ کو گود میں اٹھایا ہے۔ یہ تصویر اس وقت کھینچی گئی جب مہاتما گاندھی گول میر کانفرنس کے دوسرے سیشن میں شرکت کیلئے سمندری جہاز کے ذریعے برطانیہ کے جانب عازم سفر تھے۔

اسی جہاز میں عزیز فاطمہ بھی اپنے والدین کے ہمراہ سفر کر رہی تھیں۔