کرونا وائرس: انسانی حفاظت کی اشیاء کی درآمد پر پابندی

مراسلہ تمام صوبوں کے ڈائریکٹرز کو بھی بھجوا ديا
فوٹو: اے ایف پی

کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کے خدشے کے پيشِ نظر انسانی حفاظت کی اشیاء کی پاکستان میں درآمد پر پابندی لگا دی گئی۔

ڈرگ ریگولیٹری اتھارٹی کی جانب سے جاری نوٹيفکيشن ميں کہا گيا ہے کہ ماسک، حفاظتی عینک اور تلف پذیر دستانے، جوتے اور ٹوپياں بیرون ملک بھیجنے پر پابندی لگائی جا رہی ہے۔ ايکسپورٹرز سانس لینے کے آلات اور ہاتھ صاف کرنے والے سينی ٹائرز بھی نہيں بھيج سکيں گے۔

ڈريپ کے مطابق کرونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ پر حفاظتی اشیا کی قلت پیدا ہوسکتی ہے۔ خلاف ورزی پر درآمد کنندگان کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا۔

کروناوائرس: چین میں مزید 68 افراد ہلاک

ڈريپ نے مراسلہ تمام صوبوں کے ڈائریکٹرز کو بھی بھجوا ديا ہے۔

واضح رہے کہ چین میں مزید 68 افراد کی ہلاکت کے بعد مرنے والوں کی تعداد 490 ہوگئی۔ وائرس اب تک 27 ممالک میں پھیل چکا ہے۔

عالمی ادارہ صحت نے ووہان شہر سے کرونا کا پھيلاؤ روکنے کے لیے چين کی حکومت کی جانب سے کیے جانے والے اقدامات کی تعريف کی ہے۔ ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ڈائريکٹر جنرل کے مطابق چين نے صورتحال سے نمٹنے کے ليے اچھا طريقہ اختيار کيا۔

Tabool ads will show in this div