سندھ حکومت نے نصابی کتاب میں غلطی تسلیم کرلی

متعلقہ پیراگراف حذف
Feb 01, 2020
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/02/Social-Studies-NA-1200-Khi-Pkg-31-01-Hasan.mp4"][/video]

سندھ حکومت نے معاشرتی علوم کی کتاب میں غلط تاریخ پرنٹ ہوجانے پر غلطی کا اعتراف کرلیا۔ ساتویں جماعت کی کتاب سے متنازع پیراگراف حذف کردیا گیا۔ فاروق ستار نے غلطی کرنے والوں کیخلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

سندھ ٹیکسٹ بُک بورڈ نے ساتویں جماعت کی معاشرتی علوم کی کتاب میں بنگلہ دیش سے ہجرت کرنے والوں کو فراری قرار دیا تھا جس پر شہریوں نے احتجاج کیا اور متحدہ قومی موومنٹ نے بھی اس پر آواز اٹھائی۔

سنیئر سیاست دان فاروق ستار نے سندھ حکومت سے مطالبہ کیا کہ ’غلطی‘ میں ملوث افسران کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔

ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب نے معاملہ اُٹھانے پرایم کیو ایم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ترجمہ کرنے میں غلطی ہوگئی تھی۔ اب تصحیح کرلی گئی ہے۔

تاریخ سے متعلق غلطی تو دور کرلی گئی مگر یہ سوال اب بھی موجود ہے کہ معاشرتی علوم کی کتاب پر بانیان پاکستان کے بجائے بے نظیربھٹو کی تصویر کیوں چھاپی گئی۔

Tabool ads will show in this div