کوئٹہ: مکان میں گیس بھرنے سے 5 افراد جاں بحق

مرنیوالوں میں میاں بیوی اور 3 بچے شامل

کوئٹہ کے ایک مکان میں گیس بھر جانے کے باعث دم گھٹنے سے ماں باپ اور 3 بچے جاں بحق ہوگئے۔

کوئٹہ میں سردی کی شدت میں اضافے کے ساتھ گیس کے غیرمحتاط استعمال کے باعث حادثات بھی بڑھنے لگے، سبزل روڈ  پر گھر میں گیس بھرجانے سے دم گھٹنے کے باعث ایک ہی خاندان کے 5 افراد جاں بحق ہوگئے۔

ریسکیو ٹیموں کے مطابق جاں بحق افراد میں میاں بیوی، بیٹا اور 2 بیٹیاں شامل ہیں، واقعے کے بعد لاشوں کو سول اسپتال منتقل کردیا گیا، جاں بحق افراد کی شناخت نوید شہزاد، ریما نوید(زوجہ)، احمد نوید (بیٹا)، ردا نوید اور ندا نوید (بیٹیاں) کے ناموں سے ہوگئی۔

متاثرہ خاندان کے اہلخانہ کا کہنا ہے کہ پانچوں افراد سردی سے بچنے کیلئے کمرے میں گیس کا ہیٹر جلتا چھوڑ کر سوگئے تھے، شام تک نہ اٹھنے اور کھٹکٹھانے کے باوجود دروازہ نہ کھولنے پر اہل علاقہ کو تشویش ہوئی، گھر کا دروازہ توڑا گیا تو میاں بیوی اور بچے کمرے میں گیس ہیٹر کے بجھنے کے باعث جمع ہونیوالی گیس سے دم گھٹ کر جاں بحق ہوچکے تھے۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ حادثات کی ایک وجہ گیس پریشر کا اچانک غائب ہونا بھی ہے، ایس ایس جی سی حکام پریشر درست کرنے کیلئے اقدامات اٹھائیں۔

واضح رہے کوئٹہ میں گزشتہ 5 سالوں میں گیس سے دم گھٹنے اور گیس لیکیج دھماکوں میں 90 اموات ہوچکی ہیں۔

GAS LEAKAGE

Tabool ads will show in this div