ڈی آئی خان میں ضمنی انتخابات،پولنگ سےپہلےدھماکا،پولنگ اسٹيشن پربم حملہ

اسٹاف رپورٹ
ڈیرہ اسماعیل خان : ڈی آئی خان کے حلقہ پی کے سڑسٹھ کولاچی میں ضمنی الیکشن کیلئے پولنگ کا آغاز ہوگیا، جو شام پانچ بجے تک بغیر تعطل جاری رہے گی۔  حلقے میں اہم مقابلہ تحریک انصاف اور آزاد امیدوار کے درمیان ہے۔ فوج اور پولیس کی نگرانی میں انتخابی سامان کی فراہمی جاری ہے۔

انتخابی دنگل خیبر پختونخوا اسمبلی کے حلقے سڑسٹھ پر چھ امیدواروں کے درمیان ٹاکرا ہوگا۔ تحریک انصاف کے اکرام اللہ خان اور آزاد امیدوار فتح اللہ میاں خیل کے درمیان اصل مقابلے کی توقع ہے۔ سردار فتح اللہ خان کو صوبائی وزیر امین خان گنڈا پور اور رکن قومی اسمبلی داور خان کی حمایت حاصل ہے جو اپنے علاقے کی تقدیر بدلنے کے لئے پُر عزم ہیں۔

پرامن انتخاب کیلئے سیکیورٹی پلان تیار کرلیا گیا ہے۔ پولنگ اسٹیشن کے باہر فوج اور پولیس اہل کار تعینات رہیں گے۔ ضمنی الیکشن کے لئے اکیانوے پولنگ اسٹیشن بنائے گئے ہیں جن  میں سے چھپن کو حساس ترین اور پینتیس کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

ووٹرز کی تعداد ایک لاکھ دو ہزار کے قریب ہے جن میں سے اڑتالیس ہزار خواتین ہیں۔ واضح رہے کہ پی کے سڑسٹھ کی نشست صوبائی وزیر قانون اسرار اللہ خان گنڈا پور کی عین عید کے روز خودکش حملے میں شہادت کے بعد خالی ہوئی تھی۔ سماء

میں

آئی

ڈی

خان

twins

prosecutor

social

Tabool ads will show in this div