برصغیر میں ناپید ہوتا کلاسیکی رقص

جیسیکا کےوالد کو اپنی بيٹی کی صلاحيتوں پر فخر ہے
Dec 31, 2019

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2018/12/KATHICK-DANCER-LHR-PKG.mp4"][/video]

کتھک رقص ايک مشکل فن ہے مگر لاہور کی تيرہ سالہ جيسيکا نے اس فن ميں خوب مہارت حاصل کرلی ہے، پرفارمنس کے دوران اس ننھی رقاصہ کی محنت اور لگن ديکھنے والوں کو نظرآتی ہے جو داد ديئے بغير نہيں رہتے ۔

مخصوص ردھم ميں گھنگھرو بندھے پاؤں زمين پر مارنا کتھک کی زبان ميں اس بنيادی مرحلے کو تتکار کہتے ہيں ۔

لاہور کی تيرہ سالہ جیسیکا گزشتہ پانچ سال سے کتھک رقص پرفارم کر رہی ہيں اوراپنے فن ميں بہت آگے بڑھنا چاہتی ہيں ۔

ان کا کہنا تھا کہ پرفارم کرتے ہوئے بے خوف ہوتی ہوں اچھا لگتا ہے جب ملکی اور غیر ملکی شائقن تعارف کرتے ہیں بڑی ہو کر پاکستان کا نام روشن کرنا چاہتی ہوں۔

جیسیکا کے والد کو اپنی بيٹی کی صلاحيتوں پر فخر تو ہے مگر ساتھ ہی اس بات کا افسوس بھی کہ پاکستان ميں اس فن کے قدردان زيادہ نہيں ہيں ۔

جيسيکا کے گھنگروں کی آواز جب کانوں میں پڑتی ہے تو ديکھنے والے اس کے سحر ميں کھوجاتے ہيں ۔

کتھک رقص برصغیر پاک وہند کا مشہور اور کلاسیکل فن ہے جو آہستہ آہستہ ناپید ہورہا ہے، باپ بیٹی کی جوڑی اس فن کو دنیا بھر میں متعارف کرانے کے ساتھ ساتھ معاشرے کی سوچ بدلنے کا عزم بھی رکھتی ہے۔

Tabool ads will show in this div